نگراں پنجاب حکومت کی بیوروکریسی میں اکھاڑپچھاڑ

نگراں پنجاب حکومت کی بیوروکریسی میں اکھاڑپچھاڑ


24نیوز : پنجاب کے نگران حکومت جس کی جب جب ضرورت پڑی نظر نہ آئی لیکن جاتے جاتے ایسی پھرتیاں کہ آخری دنوں میں بھی بیوروکریسی میں اکھاڑ پچھاڑ کردی۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن ہو گئےنگران کے جانے کا وقت آ گیا لیکن پنجاب نگران حکومت کی پھرتیاں ابھی تک جاری ہیں۔ جاتے جاتے بھی تبادلوں کےڈھیرلگادیئے۔ نگران وزیراعلیٰ پنجاب نےڈی پی اوسرگودھاکےتبادلےکی سمری منظورکرلی گزشتہ روز تین ایڈیشنل سیکرٹریز کے تبادلے کر دئیے گئے۔

یہ بھی پڑھیں:مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی بربریت جاری 

 نگران حکومت نے2روزقبل آرپی اواورڈی پی اوکاتبادلہ بھی کیا تھا، بات یہیں ختم نہیں ہوتی نگران حکومت نےوفاق سے ڈی آئی جی طارق نواز ملک اور ڈی آئی جی ڈاکٹر مسعود سلیم کی خدمات مانگی گئی ہیں۔نئی حکومت چند روز میں اقتدار سنبھال لے گی اور پنجاب کے منتخب وزیر اعلی اپنا چارج سنبھال لیں گے لیکن نجانے نگران حکومت کو جاتے جاتے بھی اکھاڑ پچھاڑ کی ضرورت کیوں پیش آ رہی ہے۔  

 

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito