پاکستان کا تجارتی خسارہ 21 ارب ڈالر سے بھی تجاوز کر گیا

پاکستان کا تجارتی خسارہ 21 ارب ڈالر سے بھی تجاوز کر گیا


اسلام آباد(24نیوز) حکومت کی درآمدی بل کم کرنے کی تمام کوششیں ناکام، پاکستان کا تجارتی خسارہ 21 ارب ڈالر سے بھی تجاوز کر گیا، درآمدات میں مسلسل اضافے نے خسارہ 24 فیصد بڑھا دیا۔

تفصیلات کے مطابق حکومت کی طرف سے درآمدات کم کرنے کے لیے سینکڑوں اشیا پر ریگولیٹری ڈیوٹی لگانے کے باوجود رواں مالی سال کے پہلے 7 ماہ کے دوران درآمدی بل 19 فیصد اضافے سے 34 ارب 51 کروڑ 20 لاکھ ڈالر تک پہنچ گیا۔ پاکستان ادارہ شماریات کے مطابق جولائی سے جنوری کے اختتام تک اشیا کی بیرونی تجارت میں پاکستان کو 21 ارب 54 کروڑ 60 لاکھ ڈالر کے رکارڈ خسارے کا سامنا رہا۔ جو گزشتہ سال سے 4 ارب 20 کروڑ ڈالر زیادہ ہے۔

واضح رہے کہ اس دوران برآمدات کا حجم 12 ارب 96 کروڑ 60 لاکھ ڈالر رہا۔جو گزشتہ مالی سال اس عرصے سے 11.2 فیصد زیادہ ہے۔ تاہم برآمدات میں اضافہ بھی تجارتی خسارہ کم نا کر سکا۔ رپورٹ کے مطابق صرف جنوری کے دوران بیرونی تجارت میں 3 ارب 64 کروڑ ڈالر کا خسارہ ہوا۔