کمسن بچی مبینہ زیادتی کے بعد قتل

کمسن بچی مبینہ زیادتی کے بعد قتل


فیصل آباد(24نیوز)فیصل آباد کے علاقہ ڈی ٹائپ میں سات سالہ رابعہ کو مبینہ زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا، ملزموں نے زیادتی کے بعد قتل کا اعتراف کرلیا۔

 تفصیلات کے مطابق فیصل آباد کے علاقہ ڈی ٹائپ میں سات سالہ رابعہ کومبینہ زیادتی کے بعد قتل کردیا گیا,رابعہ گزشتہ روز گھر سے سودا سلف لینے نکلی اور واپس نہ آئی, تلاش کرنے پر فیکٹری سے بوری بند لاش برآمد ہوئی ،پولیس نے فوری طور پہ دو نامزد ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے انھیں گرفتار کر لیا، ملزمان نے رابعہ کےساتھ زیادتی کے بعد قتل کا اعتراف جرم کر لیا۔

ملزم سلیم نے پولیس کے سامنے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ میں نے پکڑے جانے کے ڈر سے بچی کو ماردیا، وہ دکان پر دودھ لینے آئی تھی جہاں سے میں اسے قریبی فیکٹری لے گیا۔ اس نے شور مچایا کہ میں اپنی امی کو بتاؤں گی جس پر پکڑے جانے کے ڈر سے میں نے اس کا گلا دبا کرمارڈالا،ملزم کا تعلق مانسہرہ سے ہے۔

پولیس کا کہناتھا کہ زیر حراست ملزمان کا ڈی این اے ٹیسٹ لیا جائے گا، اسکے بعد ہی کارروائی کو مزید آگے بڑھا سکیں گے، اس واقعہ کے بعدشہر بھر کی فضا سوگوار ہے، جبکہ ننھی رابعہ کو آج شام چار بجے سپرد خاک کر دیا گیا۔