وزیر اعظم نےوزراءکو کھری کھری سنادیں



اسلام آباد(24نیوز) وفاقی کابینہ کا حالیہ اجلاس میں وزیر اعظم کی سخت برہمی کا اظہار کیا،وزراءکو کھری کھری سنادیں 7 فروری کو ہونے والےوفاقی کابینہ کے اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آ گئی۔

تفصیلات کے مطابق 7 فروری کو وفاقی کابینہ کے ہونے والے اجلاس کی اندرونی کہانی منظر عام پر آگئی، وزراء کو دوٹوک جواب دیتے ہو ئے وزیراعظم عمران خان کا کہناتھاکہ جو بھی چھوڑ کر جانا چاہتاہے چلا جائےکسی کو نہیں روکوں گا،جو غلط کام کرے گا خود ہی بھگتے گا، عمران خان نے کابینہ ارکان پر واضح کردیا کہ کسی کا دفاع یا ساتھ نہیں دوں گا,غلط کام نہ کیا ہے اور نا کسی کو کرنے کی اجازت دوں گا، کرپشن کرنے والوں کے لئے کسی بھی قسم کی کوئی معافی یا رعایت نہیں.

جمہوریت کی آڑ میں سمجھوتوں کا راگ الاپنے والے اب اپنا قبلہ درست کر لیں، وزیراعظم نے اجلاس میں دووزراء کا نام لیے بغیر تنقید کی,وزیراعظم کاکہناتھاکہ وزراءبہت کہتے تھے جمہوریت ہے، بات چیت سے معاملات چلا لیں گے، پہلے بھی کہا اب بھی کہتا ہوں بات چیت سے معاملات چلنے والے نہیں، وزراءکی وزیراعظم کو قائل کرنے کی ناکام کوشش پر وزیراعظم نے خاموش رہ کر بات سننے کی ہدایت کر دی، وزیراعظم سپیکر قومی اسمبلی سے بھی سخت نالاں، کارکردگی مایوس کن قرار دے دی۔

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید وزیراعظم کا اشارہ سمجھ گئے، جس پر شیخ رشید نے اپوزیشن اور سپیکر قومی اسمبلی کو ٹف ٹائم دینے کی ٹھان لی۔

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER