سابق گورنر سندھ کو مشکوک افراد کی روکنے کی کوشش، بال بال بچ گئے

سابق گورنر سندھ کو مشکوک افراد کی روکنے کی کوشش، بال بال بچ گئے


کراچی ( 24نیوز ) کراچی میں جرائم پیشہ افراد ایک بار پھر سر اٹھانے لگے،سابق گورنر سندھ بال بال بچ گئے۔

کراچی میں ڈیفنس کے رہائشی بھی عدم تحفظ کا شکار ہوگئے،فیز 6 میں  گاڑی سواروں نے سابق گورنرسندھ محمد زبیرکو روکنے کی کوشش کی، تاہم سابق گورنر تیز رفتاری سے گاڑی بھگا کر اپنے گھر پہنچ گئے،سابق گورنرسندھ اور ان کے اہل خانہ نے سیکورٹی نہ ملنے پرتحفظات کااظہارکردیا۔

سابق گورنر سندھ محمد زبیر کے مطابق رات ساڑھے گیارہ بجے وہ اپنی اہلیہ کے ہمراہ صبا ایونیو سے اپنے گھر کی طرف آرہے تھے کہ ایک گاڑی نے انہیں روکنے کی کوشش کی، تاہم جب انہوں نے گاڑی میں سوار ملزمان کے ہاتھ میں اسلحہ دیکھا توانہوں نے گاڑی دوڑا دی۔

محمد زبیر کا کہنا تھا کہ انہیں تین چار سال سے دھمکیاں مل رہی ہیں لیکن نہ انہوں نے سکیورٹی مانگی اور نہ ہی حکومت نے مہیا کی ہے،محمد زبیر کے بیٹے احسن زبیر نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ اس واقعے کے بعد سے اب تک کسی نے رابطہ نہیں کیا، موجودہ حالات کے پیش نظر حکومت سیکیورٹی کا فیصلہ خود کرے۔

یاد رہے گذشتہ ماہ 25 دسمبر کو ایم کیو ایم پاکستان کے سابق رکن اور سابق رکن قومی اسمبلی علی رضا عابدی کراچی کے علاقے ڈیفنس خیابان غازی میں قاتلانہ حملے میں جاں بحق ہوگئے تھے۔