ن لیگ، پی ٹی آئی اورپی ایس پی نے ایک بار پھر متحدہ کا ساتھ چھوڑ دیا

ن لیگ، پی ٹی آئی اورپی ایس پی نے ایک بار پھر متحدہ کا ساتھ چھوڑ دیا


کراچی(24نیوز) سندھ اسمبلی کی کارروائی کا بائیکاٹ کرنے والی متحدہ اپوزیشن ایوان سے باہر نکلتے ہی پھر تقسیم ہو گئی۔

سندھ اسمبلی کی کاروائی کا متحدہ اپوزیشن نے مل کر بائیکاٹ کیا، اور پھر ایوان سے باہرآگئے مگر بکھر گئے، فنکشنل لیگ نواز لیگ پی ٹی آئی اور پی ایس پی کے ارکان نے ایم کیو ایم کا ساتھ ہی چھوڑدیا تو متحدہ اپوزیشن دو حصوں میں بٹ گئی۔ سندھ اسمبلی کے قائد حزب اختلاف خواجہ اظہار الحسن نے سندھ حکومت کے فیصلے عدالت میں لے جانے کا اعلان کردیا۔

فیصل سبزواری کو اسمبلی کے باہر عوامی مسائل یاد آگئے۔ اسمبلی کے ایجنڈے کو ہی بھول گئے اور حکومت پر کڑی تنقید کی۔

ایم کیو ایم پاکستان کے سندھ اسمبلی میں پارلیامانی لیڈر سید سردار احمد بھی اپنے ارکان سے ناراض نظر آئے ایم کیو ایم کے ارکان نے حکومت کے خلاف کیئے گئے فیصلوں سے متعلق اپنی پارٹی کے پارلیامانی لیڈر کو بھی اعتماد میں نہیں لیا۔