مشیر وزیراعلیٰ سندھ اعجازجاکھرانی کےگھرنیب کاچھاپہ

 مشیر وزیراعلیٰ سندھ اعجازجاکھرانی کےگھرنیب کاچھاپہ


کراچی(24 نیوز) وزیراعلیٰ سندھ کےمشیراعجازجاکھرانی کے گھر پر نیب نے چھاپہ ماردیا، نیب ٹیم گھر میں چار گھنٹے سے زائد تک تلاشی لیتی رہی،مختلف فائلیں قبضے میں لےلیں۔ وزیرِاطلاعات سندھ سعیدغنی اعجازجاکھرانی کےگھر پہنچ گئے، کہتے ہیں احتساب کے نام پر ملک میں ڈھونگ ہو رہا ہے۔

وزیراعلی سندھ کے مشیر اعجاز جاکھرانی بھی نیب ریڈار پر آگئے، نیب کراچی نےاعجاز جاکھرانی کے گھر پر چھاپہ مارا، پانچ رکنی ٹیم نے گھر کی تلاشی لی اور مختلف فائلیں قبضے میں لے لیں۔ ذرائع کے مطابق اعجاز جاکھرانی کے خلاف آمدن سے زائد اثاثوں کی تحقیقات کی جارہی ہیں،انہوں نے سندھ ہائیکورٹ سے ضمانت قبل ازگرفتاری بھی کرارکھی ہے۔

چھاپے کی اطلاع ملتے ہی وزیراطلاعات سندھ سعید غنی اعجاز جاکھرانی کے گھر پہنچ گئے، انہوں نے کہا کہ نیب کا چھاپہ ایسے مارا گیا جیسے اعجاز جاکھرانی کا تعلق کسی کالعدم تنظیم سے ہے، کوئی وارنٹ نہیں دکھایا گیا، احتساب کے نام پر ملک میں ڈھونگ ہو رہا ہے۔

سعید غنی نے مزید کہا کہ ذوالفقار مرزا کے بیٹے حسنین مرزا، زلفی بخاری اور علیمہ خان سمیت دیگر کو پوچھا بھی نہیں جاتا، نیب خود مختار ادارہ نہیں،حکومت کے اشاروں پر چل رہا ہے، نیب کے قانون کی کوئی حثیت نہیں ہے۔

پیپلز پارٹی کی خواتین ارکان صوبائی اسمبلی نے اعجاز جاکھرانی کے گھر کے باہر دھرنا دے دیا اور مطالبہ کیا کہ اعجاز جاکھرانی کے گھر خواتین کو جانے کی اجازت دی جائے۔ آصفہ بھٹو زرداری نے اعجازجاکھرانی کے گھر پر نیب چھاپے کی مذمت کی، ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ سیاسی حریفوں کو نشانہ بنانا موجودہ حکومت کی روایت بن گئی ہے۔

Malik Sultan Awan

Content Writer