ریلوے اراضی کی لیز سے متعلق تمام مقدمات یکجا کرنے کا حکم

ریلوے اراضی کی لیز سے متعلق تمام مقدمات یکجا کرنے کا حکم


اسلام آباد(24نیوز)سپریم کورٹ نےریلوے اراضی کی لیز سے متعلق تمام مقدمات یکجا کرنے کا حکم دیدیا۔

سپریم کورٹ میں ریلوے اراضی کی ملکیت سے متعلق کیس کی سماعت جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے  کی،عدالت نے ریلوے اراضی کی لیز سے متعلق تمام مقدمات یکجا کرنے کا حکم دیا ہے،جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دئیے کہ وزیر ریلوے نے خود کہا تھا پانچ سال سے زائد لیز نہیں دینگے،  وکیل نے جواب دیا کہ مختصر دورانیہ کی لیز پر کوئی کاروباری شخص تیار نہیں۔

جسٹس  اعجاز الاحسن پھر بولے  ریلوے  کو زمین کمائی کیلئے نہیں دی گئی تھی، ریلوے اراضی پر ہائوسنگ سکیمز بن چکی ہیں،  ایک زمانہ تھا جب ملک میں سب سے زیادہ اراضی ریلوے کی تھی،ریلوے اپنی زمین سنبھال ہی نہیں سکا،جو اراضی ریلوے کے زیر استعمال نہیں وہ حکومت کو واپس کرے،ریلوے لائن میں توسیع ہوتی تو نظر نہیں آرہی،کل رائل پام کی حوالے سے کیس کا فیصلہ کرینگے،  رائل پام کا کیس کئی سال سے لٹک رہا ہے۔

جسٹس عظمت سعید نے کیس کی سماعت غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کردی۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer