ایف بی آر کی بڑی کارروائی، بیرون ملک ڈالر منتقل کرنے والی فیملی کو دھر لیا

ایف بی آر کی بڑی کارروائی، بیرون ملک ڈالر منتقل کرنے والی فیملی کو دھر لیا


کراچی(24 نیوز) کسٹم کورٹ نے40لاکھ سے زائد امریکی ڈالر بیرون ملک منتقل کرنے والی فیملی کے ورانٹ گرفتاری جاری کردیئے، عدالت نےآئندہ سماعت پرملزموں کو گرفتار کرکے پیش کرنے کی ہدایت کردی۔

 تفصیلات کے مطابق منی لانڈرنگ کے خلاف ایف بی آر کی سرگرمیاں تیز ہوگئیں، منی لانڈرنگ میں ملوث ایک فیملی کا انکشاف ہوا ہے۔ باپ، بیٹا اور دو بیٹیاں 40 لاکھ سے زائد ڈالر کی منی لانڈرنگ میں ملوث نکلے۔ایف بی آر نے رپورٹ کراچی کی کسٹم عدالت میں پیش کردی۔ رپورٹ میں بتایا گیا کہ فیملی کی جانب سے 40 لاکھ، 94 ہزار 500 ڈالرز امریکہ منتقل کیے گئے۔

ملزمان نےمنی لانڈرنگ کیلئے2016 میں متعدد اکاؤنٹس کھولےاور کراچی کی مختلف ایکسچینجز سے بھاری تعدادمیں ڈالرخریدے۔ملزمان میں باپ پرویز علی، بیٹا جبران اور دو بیٹیاں سارہ اور انعم علی شامل ہیں جو امریکی شہریت بھی رکھتے ہیں، رپورٹ میں مزید بتایا گیا کہ ملزمان نے 11 کروڑ روپے سے زائد کا ٹیکس بھی چوری کیا ہے، شبہ ہے کہ ملزمان نے منی لانڈرنگ کرکے غیر قانونی اثاثے بنائےجس پر عدالت نے ملزم باپ پرویز اور انکی بیٹیوں اوربیٹے کے وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے ملزمان کے خلاف مزید تحقیقات کی ہدایت کردی۔