اسرائیلی آبادکاروں نے مسجد اقصیٰ پر دھاوا بول دیا

 اسرائیلی آبادکاروں نے مسجد اقصیٰ پر دھاوا بول دیا


(24 نیوز) درجنوں اسرائیلی آبادکاروں نے پولیس کی سخت حفاظت میں مسجد اقصیٰ پر دھاوا بولا اور بے حرمتی کی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مقبوضہ بیت المقدس میں اسلامی اوقاف اتھارٹی کے مطابق آبادکاروں کا ایک گروپ مراکشی دروازے سے مسجد اقصیٰ میں داخل ہوا اور اس کے مقدس مقامات کی بے حرمتی کی۔صہیونی آبادکاروں کو یہودی ربیوں کی جانب سے مبینہ ٹیمپل ماونٹ کے بارے میں معلومات بھی فراہم کی گئیں اور انہوں نے مذہبی رسومات کی ادائیگی کی آڑ میں اشتعال انگیز حرکات کا ارتکاب کیا ۔

مسجد اقصی کوصہیونی آبادکاروں کی مذہیبی رسومات کی ادائیگی کے لیے جمعہ اور ہفتہ کے علاوہ روزانہ صبح اور دوپہر کو کھولا جاتا ہے۔ اسرائیلی پولیس نے صہیونی آبادکاروں کی مذہبی رسومات کی ادائیگی کے بعد 10.30 منٹ پر مراکشی دروازے کو بند کردیا جسے آبادکار مسجد میں داخلے کے لیے استعمال کرتے ہیں، بعد میں دوپہر کے وقت اسی دروازے کو آبادکاروں کی شام کی رسومات کی ادائیگی کے لیے کھول دیا جاتا ہے۔مسجد اقصیٰ میں آبادکاروں کے داخلے کے دوران مسلمان عبادت گزاروں کو مسجد اقصیٰ میں داخلے سے روک دیا جاتا ہے اور انکے آئی ڈی کارڈ ضبط کر لیے جاتے ہیں۔