زینب زیادتی واقعہ کی گونج قومی اسمبلی تک پہنچ گئی، ارکان کا اظہارِ برہمی

زینب زیادتی واقعہ کی گونج قومی اسمبلی تک پہنچ گئی، ارکان کا اظہارِ برہمی


اسلام آباد (24 نیوز) قصور واقعہ پر ملک بھر کی فضا سوگوار اور عوام میں غم و غصہ برقرار، پارلیمانی رہنماؤں کا افسوسناک واقعہ پر دکھ اور برہمی کا اظہار۔

پھول سی زینب کے ساتھ پیش آنے والے افسوسناک واقعہ پر چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے داخلہ سینیٹر رحمان ملک نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے نوٹس وزارت داخلہ کو بھیجتے ہوئے احکامات جاری کیے کہ پنجاب پولیس 5 دنوں کے اندر زینب کے ساتھ زیادتی اور قتل کی رپورٹ کمیٹی کو جمع کرائے۔

سینیٹر کلثوم پروین نے کہا کہ سزا و جزا کا عمل سخت کیا جائے۔ سخت قانون بنایا جائے۔ جب تک کوئی ایسا سزا کا نظام وضع نہیں ہوگا تو سلسلہ طویل ہوتا جائے گا جبکہ عائشہ سید نے غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے ملزمان کی فوری گرفتاری اور کربناک سزا کا مطالبہ کیا۔

رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر شیریں مزاری نے شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ پنجاب حکومت ملوث افراد کیخلاف فوری کارروائی کرے۔

چیئرمین سینیٹ میاں رضاربانی نے واقعہ پر شدید دکھ اور تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح کے واقعات کے تدارک کے لیے قوانین پر سختی سے عملدرآمد کی ضرورت ہے۔

لائیو ویڈیو لنک: