24 نیوز بنا مقتول زینب کی آواز، انصاف دلانے کا عزم


قصور (24 نیوز) زینب کے اغواکی خبر اور پھر اس کی سی سی ٹی وی فوٹیج سب سے پہلے ٹوئنٹی فورنیوزنے نشرکی مگر پولیس کی بروقت کارروائی نہ ہونے سے وہ المناک سانحہ ہوا جس نے پورے مُلک کو تڑپا کررکھ دیا۔

تفصیلات کے مطابق زینب جب اغوا ہوئی تو یہ ٹوئنٹی فور نیوز ہی تھا۔ جس نے سب سے پہلے اس خبرکو نشر کیا اور ارباب اختیار کو جگانے کی کوشش کی۔ ٹوئنٹی فور نیوز نے دوسرے دن زینب کے اغوا کی سی سی ٹی وی فوٹیج حاصل کرکے ایک بار پھر سب سے پہلے اس اہم معاملہ پر حُکام کی توجہ منبذول کرائی لیکن پولیس زینب کو بازیاب نہ کراسکی۔

یہ بھی پڑھئے: زینب زیادتی واقعہ کی گونج قومی اسمبلی تک پہنچ گئی، ارکان کا اظہارِ برہمی

پھر وہ خبر آئی جس نے پورے مُلک کو تڑپا کر رکھ دیا۔ سات سالہ زینب قتل کردی گئی۔ لاش کچرے کے ایک ڈھیر پر پڑی ملی۔ زینب کا لہو اب تک بے سُراغ ہے۔

متعلقہ خبر: زینب کے قاتلوں کو جلد از جلد کیفرکردار تک پہنچایا جائے، آرمی چیف

ٹوئنٹی فورنیوز زینب کے اغوا سے نماز جنازہ تک اور اس کے بعد سے اس کے خاندان کے دُکھ میں شریک ہے۔ ہم وعدہ کرتے ہیں زینب کے قاتل کی گرفتاری اور پھر اس کیفر کردار تک پہنچائے جانے تک زینب کے خاندان اور عوام کی آواز رہیں گے۔ کیونکہ یہ ٹوئنٹی فور نیوز ہی ہے جو ہوتا ہے سب سے پہلے ہرجگہ ہروقت۔

اہم خبر : ننھی زینب کے قتل کے بعد شہر کے حالات قابو سے باہر، رینجرز طلب