’’سمگلنگ دبا کے ہو رہی ہے، اسلام آباد ائیر پورٹ کسی بھی دن گر سکتا ہے‘‘

’’سمگلنگ دبا کے ہو رہی ہے، اسلام آباد ائیر پورٹ کسی بھی دن گر سکتا ہے‘‘


اسلام آباد(24نیوز) سول ایوی ایشن ایئرپورٹس پر برآمد ہونے والی چرس اور اور کرنسی کی ریکارڈنگ کیوں نہیں کرتی؟ چیزوں کی اسمگلنگ دبا کے ہوتی ہے۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے اسلام آباد ائیر پورٹ کسی بھی دن گر سکتا ہے۔ ایئر پورٹس کی سیکورٹی رپورٹ بھی طلب کرلی۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں ایئرپورٹس پر عدم سہولیات اور مسافروں سے ناروا سلوک کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ ایڈیشنل ڈی جی سول ایوی ایشن تنویر اشرف چیف جسٹس کے حکم پر پیش ہوئے۔ چیف جسٹس نےایڈیشنل ڈی جی سول ایوی ایشن کی سرزنش کرتے ہوئے ریمارکس دیے کہ آپ کو عدالتی حکم کا نہیں معلوم تو آپ کیا کررہے ہیں؟ صرف دفتر میں بیٹھ کر گدی گرم کررہے ہیں اور چپڑاسی کو بھیج دیتے ہیں۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ پروازیں لیٹ ہوتی ہیں تو لوگ زمین پر چادر بچھا کر بیٹھ جاتے ہیں جس پر ایڈیشنل سینئر ڈائریکٹر سول ایوی ایشن اتھارٹی نے موقف اپنایا کہ اسلام آباد ایئر پورٹ بہت بڑا بن گیا وہاں کافی سہولیات ہیں ۔عدالت نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ آپ بھول جاؤ فوگی موسم کو،  فلائٹ ویسے بھی تاخیر کا شکار ہوتی ہیں ،ہم آپ کو گھر بھی بھیج سکتے ہیں۔

عدالت نے مسافروں کو ادائیگی کی ایک سال کی رپورٹ طلب کی ۔  آئندہ سماعت دو ہفتوں کے لئے ملتوی کردی گئی۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔