سابق چیف جسٹس افتخار چودھری "عمران خان "کے پیچھے پڑ گئے

12:01 PM, 10 Jun, 2018

وقار نیازی
Read more!

اسلام آباد(24نیوز) سابق چیف جسٹس افتخار چودھری نے بم پھوڑ دیا۔ عمران خان کے خلاف سیتا وائٹ کیس کھلوانے کا اعلان کر دیا۔

 نسیم زہرا ایٹ 8 میں خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے افتخار چودھری نے کہا کہ وہ عمران کی امریکی شہری سیتا وائٹ سے غیر قانونی شادی اور بچے کی پیدائش کا معاملہ عدالت میں لائیں گے۔ انھوں نے کہا کہ عمران خان 62 ون ایف پر پورا نہیں اترتے جو باہر جا کر اپنی بیوی اور بیٹی کو تسلیم کرتے ہیں لیکن یہاں تسلیم نہیں کرتے۔

سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری نے کہا کہ ان کی پارٹی عمران خان کے خلاف پانچوں حلقوں سے امیدوار میدان میں اتارے گی اور ہر امیدوار آرٹیکل 62 ون ایف کے تحت عمران خان کی اہلیت کو چیلنج کرے گا۔  افتخار چوہدری کا کہنا تھا کہ ان کے پاس ثبوت ہیں کہ عمران خان نے بیرون ملک ٹیریان کو اپنی بیٹی کے طور پر تسلیم کرلیا ہے لیکن پاکستان میں اس چیز کو تسلیم نہیں کیا۔انھوں نے کہا ہم یہ چاہتے ہیں کپ ہمارے ملک کا جو لیڈر بنے وہ قابل اعتماد انسان ہو ، اس پر ٹرسٹ کیا جاسکے۔

سماجی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے نسیم زہرہ نے کہا کہ سابق چیف جسٹس کے مطابق وہ اپنے 5 امیدواروں کے ذریعے 15 سے 20 سال پرانے کیس کو سپریم کورٹ لے کر جائیں گے جس  کا مطلب یہ ہے کہ کہ ان کی ٹیم عمران خان کو بھی نکالنا چاہتی ہے۔

مزیدخبریں