قومی اسمبلی کا ایک اور اجلاس ہنگامہ آرائی کی نذر

قومی اسمبلی کا ایک اور اجلاس ہنگامہ آرائی کی نذر


اسلام آباد(24 نیوز) قومی اسمبلی کااجلاس ہنگامے کی نظر، آصف زرداری کی گرفتاری پر پیپلز پارٹی ارکان کا احتجاج، بلاول بھٹو کو فلور نہ ملنے پر ایوان میں اپوزیشن کا ہنگامہ اور واک آؤٹ، شہباز شریف سمیت اپوزیشن نے پروڈکشن آرڈرز کا مطالبہ کردیا۔

قومی اسمبلی کا ایک اور اجلاس ہنگامہ آرائی کی نذرہوگیا،  اپوزیشن کے احتجاج پر ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری نے اجلاس ملتوی کردیا۔ ڈپٹی اسپیکر کاچیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹوکومائیک نہ دینا احتجاج کاسبب بنا۔ اپوزیشن ارکان نےاسپیکرڈائس کا گھیراؤکرلیا۔ اس دوران وزیرریلوے شیخ رشید تقریرکرتےرہے اور بار بار اجلاس ملتوی کرنےکاکہتےرہے۔ شورشرابے کے دوران شیخ رشید نےکہا مجھے بات نہ کرنے دی گئی توکسی کوبولنےنہیں دوں گا۔

اس سےقبل پیپلزپارٹی ارکان نےسابق صدرآصف علی زرداری کی گرفتاری کیخلاف احتجاج کیا۔ شازیہ مری نےحکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا،یہ کیسی جمہوریت ہے؟اسپیکرنےشازیہ مری کا مائیک بند کروادیا، جس پر اپوزیشن ارکان نےاحتجاج کیا۔

قائدحزب اختلاف شہبازشریف نے آصف علی زرداری کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کا مطالبہ کردیا۔ شہبازشریف نےکہانیب کےاقدام کا کوئی جواز نہیں بنتا، سابق وزیراعظم راجاپرویزاشرف کومائیک نہ ملنےپربھی پیپلزپارٹی ارکان نےایوان سے واک آؤٹ کیا۔