سٹاک مارکیٹ: سرمایہ کاروں کے ایک کھرب بیس ارب ڈوب گئے


کراچی(24نیوز) ملکی سیاسی حالات میں اتار چڑھاؤ نے ہفتے کے دوران اسٹاک مارکیٹ کو اپنی لپیٹ میں رکھا ہے۔ سرمایہ کاروں کے ایک کھرب بیس ارب روپے ڈوب گئے۔

ہفتہ کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاروں اور ملکی اداروں کی طرف سے شئیرز کی فروخت کے باعث بازار دباؤ میں رہا، جبکہ زرمبادلہ کے ذخائر میں مسلسل کمی اور آئی ایم ایف کی اس بارے میں رپورٹ نے بھی سرمایہ کاروں کو محتاظ کر دیا، ہفتے کے اختتام پر مجموعی طور پر ہنڈرد انڈیکس 729 پوائنٹ کی کمی سے 43 ہزار 11 پر بند ہوا، کاروباری حجم میں 16 فیصد کمی دیکھی گئی اور اوسطا روزانہ 15 کروڑ 20 لاکھ شئیرز کا کاروبار ہوا۔

یہ بھی پڑھیں: دھرنوں، احتجاجی سیاست نے ایشیا کی اسٹاک مارکیٹ کو بدترین بنا دیا 

 مارکیٹ میں شئیرز کی مجموعی مالیت میں 120 ارب روپے کی کمی سے 89 کھرب 89 ارب روپے رہ گئی، ہفتے کے دوران بیرونی سرمایہ کاری کے حجم میں 39 لاکھ ڈالر کی کمی دیکھی گئی، جبکہ مقامی میوچل فنڈز نے بھی 66 لاکھ ڈالر کے شئیرز فروخت کیے۔