لیگی حکومت کا نامکمل ایل این جی پاور پلانٹس ہنگامی بنیادوں پر چلانے کا فیصلہ


24 نیوز : حکومت نے جلد بازی میں نا مکمل ایل این جی پاور پلانٹس ہنگامی بنیادوں پر چلانے کا فیصلہ کر لیا۔ حویلی بہادرشاہ پاور پلانٹ میں آج سے پیداوار شروع جبکہ بھکی پاور پلانٹ 6 روز بعد چلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے طابق ایل این جی پاور پلانٹس سے متعلق سپریم کورٹ نے  نوٹس لیا تو حکومت کی مشکلات بڑھ گئیں۔ ناچاہتے ہوئے بھی حکومت نے ایل این جی پاور پلانٹس چلانے کا فیصلہ کر لیا۔

یہ بھی پڑھیں: پارلیمنٹ چیئرمین نیب کو طلب کرکے جواب مانگے، وزیر اعظم 

حکومت نے حویلی شاہ بہادر پاور پلانٹ سے بجلی کی پیداوار شروع کردی۔ ایل این جی پر چلنے والا بھکھی پاور پلانٹ 15 مئی تک چلانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ حکومت نے جلد بازی میں نامکمل پاور پلانٹس کا افتتاح بھی کر دیا ہے۔

ذرائع کے مطابق ایل این جی پاور پلانٹس کی مدت تکمیل 24 ماہ ہوتی ہے جبکہ حکومت نے ایل این جی پاور پلانٹس کو 9 ماہ میں مکمل کر لیا۔ جلد افتتاح کی پالیسی سے ایل این جی پاور پلانٹس مطلوبہ نتائج دینے میں ناکام ثابت ہوں گے۔

پڑھنا نہ بھولیں: چیف جسٹس پاکستان کا سانحہ اے پی ایس پر جوڈیشل کمیشن بنانے کا حکم 

پاور ڈویژن ذرائع کے مطابق پلانٹس کی ٹیکنالوجی کوسمجھنے اور ٹیسٹنگ کرنے میں مزید وقت لگ سکتا ہے۔وزارت توانائی کے حکام کا کہناہےکہ پاور پلانٹس کی ٹیکنالوجی نئی ہے، ٹیسٹ کرنے میں دیر لگے گی۔