بڑےافسران کیلئےبڑی خبرآگئی

بڑےافسران کیلئےبڑی خبرآگئی


لاہور (24نیوز) صوبہ بھرکےپی سی ایس افسروں کی ترقیوں کاطریقہ کارکالعدم قرار دے دیا گیا۔ پنجاب سیکرٹریٹ سروس اور پنجاب مینجمنٹ سروس کی ترقیوں کیلئےنیاطریقہ کارواضع کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق صوبائی افسران کی اپیلیں منظورہو گئیں۔ اب صوبے کے افسران کی ترقیاں نئے طریقہ کارکے ذریعے ہوں گی۔ پنجاب سیکرٹریٹ سروس کوٹہ30 فیصد سے بڑھا کر 37 فیصدکردیا گیا۔جبکہ پی ایم ایس افسران کے کوٹہ میں کمی کرتے ہوئے70فیصدسےکم کرکے 63 فیصد کردیا گیا۔

یہ بھی ضرور پڑھیں:نواز شریف نے چیئرمین نیب سے استعفیٰ مانگ لیا 

 واضح رہے کہ چیئرمین پنجاب سروس ٹربیونل شعیب سعیدکی سربراہی میں فل بینچ نے پنجاب سیکرٹریٹ سروس کے افسران کی درخواستوں پر فیصلہ سنایا۔ درخواست گزارنے موقف اختیارکیا کہ پنجاب میں پی سی ایس افسروں کی تعداد کےمطابق پروموشن کوٹہ درست نہیں۔ پنجاب سیکریٹریٹ سروس کے 452افسروں کی تعدادکےمطابق کوٹہ مختص نہیں کیاگیا۔ جبکہ پی ایم ایس کےافسران کی ترقی کے لئے تعداد سے زیادہ کوٹہ دیا گیا۔

پڑھنا نہ بھولیے:اقتدار آخری سانسوں پر،حکومت نے ہاتھ پاوں مارنا شروع کر دئیے 

 پنجاب حکومت کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پی ایس ایس افسران کے پاس فیلڈ کا تجربہ نہ ہونےکی وجہ سے ان کا پرموشن کوٹہ کم رکھا گیا۔ ٹربیونل نےدلائل سننے کے بعد پنجاب سیکرٹریٹ سروس کے افسران کی پرموشن کا کوٹہ بڑھانے کے لئے اپیلیں منظور کر لیں۔