نواز شریف عدلیہ کی توہین کرتے ہیں، شہباز شریف تکریم

نواز شریف عدلیہ کی توہین کرتے ہیں، شہباز شریف تکریم


لاہور (24 نیوز) نواز شریف عدلیہ کی توہین کرتے ہیں تو شہباز شریف عدلیہ کی تکریم کرتے ہیں۔ نواز شریف کا سرعدلیہ کے سامنے جھکنے کو تیار نہیں۔ شہباز شریف کا سر عدلیہ کے سامنے تسلیم خم ہے۔

سابق وزیراعظم پاکستان میاں نواز شریف عدلیہ کے خلاف تقاریر اور بیانات دیتے ہیں اور سپریم کورٹ کے جج صاحبان سے پوچھ رہے ہیں کہ مجھے کیوں نکالا۔ دوسری طرف آج سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں جب خادم اعلیٰ کو طلب کیا گیا تو وہ سر تسلیم خم کرتے پہنچے اور سرتسلیم خم ہی رکھا۔ چیف جسٹس استفسار کرتے رہے، وزیراعلیٰ جواب دیتے رہے۔ چیف جسٹس نے صاف پانی کا مسئلہ اٹھایا تو وزیراعلیٰ نے اف تک نہ کیا۔ ہسپتالوں میں ایمرجنسی کے حالات پر چیف جسٹس نے سوال اٹھایا تو شہباز شریف نے بہتری کے لئے وقت مانگ لیا۔

شہباز شریف نے کہا کہ وہ عدالت کا احترام کرتے ہیں، چیف جسٹس کی خواہش ان کے لئے حکم ہے، لیکن نواز شریف عدالت کا حکم اپنی خواہش کے منافی سمجھتے ہیں۔