طاہر القادری کے ساتھ 18 جنوری کو پوری طاقت کے ساتھ تحریک میں شامل ہوں گا:عمران خان


اسلام آباد(24نیوز) تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ قصور واقعے سے عوام کو بہت دکھ ہوا ہے، زینب قتل کے دلخراش واقعہ نے لوگ کو متحد کر دیا ہے،ان کا کہناتھا کہ جب مہذب ممالک میں ایسے واقعات پیش آتے ہیں توان کے تدارک کیلئے انتظامات کئے جاتے ہیں،ساتھ ہی ساتھ انہوں نے کہا ہے کہ طاہر القادری کا ساتھ دینے کیلئے 18 جنوری کو پوری طاقت کے ساتھ تحریک میں شامل ہوں گا۔
بنی گالہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ سانحہ اے پی ایس کے بعد زینب قتل بڑا واقعہ ہے جس سے قوم کو تکلیف ہوئی اور اس واقعہ نے قوم کو یک زبان کر دیا ہے،ان کا کہناتھا کہ جب سانحہ اے پی ایس پیش آیا تو تمام سیاسی مذہبی جماعتوں نے متحد ہو کر ایک پیغام دیا کہ گڈ اور بیڈطالبان کے فرق کے بغیر کارروائیاں کی جائیں جس سے ملک میں دہشتگردی واقعات کم ہوئے۔
عمران خان کا کہناتھا کہ جب مہذب معاشروں میں ایسے واقعات پیش آتے ہیں تو حکومتیں ایسے واقعات کے تدارک کیلئے اقدامات کرتی ہیں ،یہاں قصور میں 12 واقعات رونما ہو چکے ہیں لیکن پنجاب بچیوں سے زیادتی کے واقعات روکنے میں مکمل ناکام ہو چکی ہے، ان کا کہناتھا کہ لوگوں کا پنجاب حکومت اور پولیس سے اعتماد اٹھا چکا ہے،اس لئے متاثرہ خاندان نے چیف جسٹس آف پاکستان سے انصاف مانگاہے۔
تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ تحریک انصاف سانحہ ماڈل ٹاﺅن کے متاثرین کے ساتھ ہے،ہمارا چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ ہے کہ سانحہ ماڈل ٹا?ن کا نوٹس لیں،ان کا کہناتھا کہ طاہر القادری کا ساتھ دینے کیلئے 18 جنوری کو پوری طاقت کے ساتھ تحریک میں شامل ہوں گا۔
عمران خان نے کہا کہ قصورواقعے سے عوام کوبہت دکھ ہوا، مہذب ممالک میں ایسے واقعات کاتدارک کیاجاتاہے،لوگوں کا پنجاب حکومت اور پولیس سے اعتماد اٹھ چکاہے، متاثرین نے چیف جسٹس پاکستان سے انصاف مانگا ہے۔
انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاﺅن کے متاثرین 4 سال سے انصاف کی فراہمی کیلئے دربدر کی ٹھوکریں کھا رہے ہیں،ہمارا چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ ہے کہ سانحہ ماڈلٹاﺅن کا نوٹس لیں اور متاثرین کو انصاف کی فراہمی یقینی بنائیں۔

ویڈیو دیکھنے کیلئے کلک کریں