نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نیب ریفرنسز سےعلیحدہ ہوگئے

نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نیب ریفرنسز سےعلیحدہ ہوگئے


اسلام  آباد(24نیوز) نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نیب ریفرنسز سےالگ ہوگئے۔  خواجہ حارث نے وکالت نامہ واپس لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق لندن اڑان کی خواہش لیے احتساب عدالت پہنچنے والے نواز شریف اپنا وکیل بھی کھو بیٹھے۔  نیب ریفرنسز کی سماعت سے نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے وکالت نامہ واپس لیتے ہوئے ٹیم سمیت کیس سے علیحدگی اختیار کرلی ۔ خواجہ حارث نے کیس سے الگ ہونے کی درخواست بھی عدالت میں جمع کرا دی ۔

یہ بھی پڑھیں: چودھری نثار کا نواز شریف کو کراراجواب 

احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے نواز شریف سے مخاطب ہو کر کہا کہ آپ کس کو نیا وکیل کریں گے یا خواجہ صاحب کو ہی منا لیں گے؟ جس پر نواز شریف نے کہا کہ میں مشورہ کر کے بتاتا ہوں۔جج محمد بشیر نے وکیل سے متعلق کل تک آگاہ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کیس کی سماعت کل تک ملتوی کر دی۔

  خواجہ حارث   کاکہنا ہے کہ سپریم کورٹ نے میرے موقف کوتسلیم نہیں کیا۔ہفتے اور اتوار کو بھی عدالت میں آنے کا حکم دیا گیا۔ اس طرح دباؤمیں کام نہیں کرسکتا،عدالت کہتی ہے کہ ایک مہینے میں کیس کا فیصلہ کریں جس کی وجہ سے انھوں نے اس کیس سے دستبردار ہونے کا فیصلہ کیا۔یاد رہے کہ خواجہ حارث تقریبا 9 ماہ نواز شریف کے اس مقدمہ میں ان کے وکیل رہے۔

یہ بھی پڑھیں: سپریم کورٹ کا شریف خاندان کیخلاف ٹرائل کی مدت میں مزید توسیع کا فیصلہ 

واضح  رہے کہ نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے گزشتہ روز عدالت سے درخواست کی تھی کہ  6 ہفتوں میں ٹرائل مکمل کرنے کا وقت دیا جائے جسے عدالت نے مسترد کرتے ہوئے کیس کا فیصلہ ایک مہینے کے اند ر اندر کرنے کا حکم دیا تھا۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔