میرے بنیادی حقوق بری طرح سلب ہورہے ہیں: نوازشریف


  لاہور( 24نیوز ) سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کا کہنا ہے کہ میرے بنیادی حقوق سلب کیے جارہے ہیں اور ایسا ماحول بنایا جا رہا ہے کہ میں اپنے وکیل کی خدمات سے بھی محروم ہو گیا ہوں۔

لاہورمیں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کا کہنا تھا کہ میرے بنیادی حقوق سلب کیے جارہے ہیں اور ایسا ماحول بنایا جا رہا ہے کہ میں اپنے وکیل کی خدمات سے بھی محروم ہو گیا ہوں۔سابق وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ خواجہ حارث میرے کیس سے دستبردار ہوگئے، شرائط کی وجہ سے کوئی بھی وکیل پیش ہونے کوتیار نہیں ہے۔ میرے بنیادی حقوق بری طرح سلب ہورہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:میں نے منہ کھولا تونواز شریف منہ دکھانے کے قابل نہیں رہیں گے: چودھری نثار 

نواز شریف کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس نے کہا ایک ماہ میں فیصلہ سنایا جائے۔ کیا کوئی ایک مقدمہ بھی ایسا ہے جس کی مانیٹرنگ سپریم کورٹ کا جج کر رہا ہو؟

ان کا مزید کہنا تھا کہ بہت سے راز کھل گئے بہت کے جواب آنا باقی ہے، باربار موقف بدلے گئے ہماری درجنوں درخواستیں مسترد کی گئیں۔

پڑھنا نہ بھولیں:ن لیگ بھی پی ٹی آئی کے رستے پر چل پڑی 

 مجھے حق دفاع سے محروم کیا جا رہا ہے۔ اپنی اہلیہ سے ملنے کے لیے جانے کی اجازت نہیں دی جارہی،  25 جولائی سے پہلے فیصلہ مجبوری ہے تو کر دیجئے۔ ایک ہی الزام پر کئی ریفرنس دائر کردئیے گئے، تینوں ریفرنسزپر ایک ساتھ فیصلہ سنانے کی بات کی جارہی ہے۔

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito