ٹیکس رعایتیں،قومی خزانے کو 972 ارب روپے نقصان پہنچا

ٹیکس رعایتیں،قومی خزانے کو 972 ارب روپے نقصان پہنچا


اسلام آباد(24نیوز)حکومت کی طرف سےمختلف صنعتوں اور سیکٹرز کو ٹیکسوں اور ڈیوٹیزمیں چھوٹ دینےکابھی رکارڈ ٹوٹ گیا، رواں مالی سال ٹیکس رعایتوں سےقومی خزانے کو مجموعی طور پر 972 ارب روپے کا نقصان ہوا۔

اقتصادی سروے کے مطابق رواں مالی سال مختلف صنعتوں، سیکٹرز اور درآمدکنندگان کوسیلز ٹیکس کی مدمیں 597 ارب 70کروڑ روپےکی چھوٹ دی گئی،کسٹم ڈیوٹی میں چھوٹ سے قومی خزانےکو233ارب13کروڑ روپےکانقصان ہواجبکہ انکم ٹیکس میں دی جانے والی رعایتوں کامجموعی حجم 141 ارب 65 کروڑ روپے رہا۔

بجلی پیداکرنےوالےنجی اداروں کوانکم ٹیکس کی مد میں18ارب3کروڑ روپےکی چھوٹ دی گئی۔آٹوسیکٹرکومجموعی طورپر65 ارب 42 کروڑ روپےکی کسٹم ڈیوٹی سےاستثنیٰ دیاگیا۔ چین سےآنےوالی درآمدات پر31ارب 62 کروڑ روپےکسٹم ڈیوٹی کی چھوٹ دی گئی۔ماضی میں بھی حکومت کی طرف سےمختلف صنعتوں اورسیکٹرز کو ٹیکسوں میں رعایت اور استثنیٰ دیاجاتا رہا، لیکن ایک سال میں972ارب روپےکی چھوٹ ایک نیا ریکارڈ ہے۔

گزشتہ مالی سال قومی خزانے کو اسی مد میں 540 ارب، اور اس سےپچھلےسال415ارب روپےکا نقصان ہواتھا۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer