عمران خان کےمشیر کی قسمت کا فیصلہ ہوگیا



اسلام آباد(24نیوز) اسلام آباد ہائی کورٹ میں مشیر وزیراعظم زلفی بخاری کانام ای سی ایل سے نکال دیا ۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ نے وزیر اعظم عمران خان کے دوست کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دیتے ہوئے 4دسمبر کو محفوظ کیا گیا جس کافیصلہ سنادیاگیا، قبل ازیں وزیراعظم عمران خان کےمشیر زلفی بخاری کا  نام ای سی ایل میں سے نکلےگایانہیں فیصلہ آج دن ساڑھے بارہ بجے فیصلہ سنایا گیا،  ڈویژن بینچ میں جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی شامل ہیں، اسلام آباد ہائی کورٹ نے چار دسمبر کو فیصلہ محفوظ کیا تھا،ذرائع کا کہنا تھا کہ زلفی بخاری نے اپنا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کے اقدام کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کرتے ہوئے نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے خارج کرنے کی استدعا کی تھی۔

واضح رہے کہ زلفی بخاری وزیراعظم خان کے قریبی دوست ہیں ، ان کا نام  آف شور کمپنیوں کے باعث پاناما لیکس میں بھی آیا ہے،جس کے باعث وہ نیب عدالت میں متعدد بارپیش ہو چکے ہیں،گزشتہ دنوں سپیشل پراسیکیوٹر نیب عمران شفیق نے مشیر زلفی بخاری کی دہری شہریت پر اسلام آباد ہائیکورٹ میں سخت موقف اپنایا تھااور عدالت کے احاطہ میں زلفی بخاری اورسپیشل پراسیکیوٹر میں تلخ کلامی بھی ہوئی تھی جس کے بعد عمران شفیق کو نیب ہیڈ کوارٹرز بلا کر استعفیٰ طلب کیا گیا تھاجس پر وہ اپنے عہدے سےمستعفی ہوگئے تھے ۔