حافظ آباد: نوسربازلڑکیوں کے ان پڑھ ہونے کا فائدہ اٹھانے لگے

حافظ آباد: نوسربازلڑکیوں کے ان پڑھ ہونے کا فائدہ اٹھانے لگے


حافظ آباد (24نیوز) نوسربازلڑکیوں کے ان پڑھ ہونے کا فائدہ اٹھانے لگے۔ شہرمیں جہیزکی لالچ دے کرلڑکوں کی ریڑھ کی ہڈی سے بون میرواوردیگرمواد نکالنے والاگروہ پکڑاگیا۔

 

تفصیلات کے مطابق نوسربازگروہ نے معصوم لڑکیوں کو ورغلا کر ان کی زندگی مشکل بنا دی۔ کم علمی اورسادہ پن ہمیشہ انسان کو نقصان پہنچاتے ہیں۔ ایسا ہی کچھ ہوا حافظ آباد کی ان پڑھ اورسیدھی سادھی لڑکیوں کے ساتھ گروہ لڑکیوں کوجہیز کی لالچ دیتا اورمیڈیکل ٹیسٹ کے بہانے ان کی ریڑھ کی ہڈیوں سے بون میرواوردیگرمواد سرنج سے نکال لیتا۔

حافظ آباد کی کسوکی روڈ پرندیم نے ساتھی ملزموں محمد اسلم اوراس کی بیوی آمنہ کے گھر دھندا شروع کر رکھا تھا۔ پولیس نے اطلاع پر چھاپا مارا ملزم اسلم اوراس کی بیوی آمنہ کو گرفتار کرلیا۔ ملزمہ آمنہ کی نشاندہی پر دیگر ملزموں کو بھی دھر لیاگیا۔

پولیس نے متاثرہ بچی کے والد کی درخواست پر مقدمہ بھی درج کرلیا۔ ملزمہ آمنہ نے اعتراف کیا ہے کہ ان کا گروہ طویل عرصے سے دھندہ کررہا ہےاب تک 90 کے قریب غریب لڑکیاں کے جسم سے مواد نکالا جا چکا ہے۔

متاثر ہونے والی لڑکیاں جسمانی طور پر انتہائی کمزور ہو چکی ہیں۔ بار بار کے علاج کے باوجود وہ تندرست زندگی سے محروم ہیں۔