انتظار قتل کیس: والدکی وزیرِ اعلیٰ سندھ سے ملاقات، ماہ گزر گیا، انصاف نہیں ملا

انتظار قتل کیس: والدکی وزیرِ اعلیٰ سندھ سے ملاقات، ماہ گزر گیا، انصاف نہیں ملا


کراچی(24نیوز)وزیرِاعلیٰ سندھ کی منظوری کےبعدانتظارقتل کیس کی تحقیقات کیلئے نئی جے آئی ٹی بن گئی۔ مقتول انتظار کے والد نے وزیرِ اعلیٰ سندھ سے ملاقات بھی کی۔

تفصیلاات کے مطابق اے سی ایل سی اہلکاروں کے ہاتھوں انتظار کا قتل ایک ماہ بیت گیا۔ وزیرِ اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے انتظار کے والد اشتیاق احمد نے ملاقات کی۔

ترجمان وزیرِ اعلیٰ سندھ کے مطابق انتظار کے والد سے وزیرِ اعلیٰ سندھ نے بنا شیڈول کے ملاقات کی۔ وزیرِ اعلیٰ سندھ کے احکامات پر بعد ازاں انتظار احمد قتل کیس کی تحقیقات کے لیئے جے آئی ٹی تشکیل دے دی گئی اور محکمہ داخلہ سندھ نے نوٹفکیشن بھی جاری کردیا۔

 سات رکنی جے آئی ٹی کی سربراہی ایڈیشنل آئی سی ٹی ڈی ثنا اللہ عباسی کریں گے، جے آئی ٹی میں رینجرز اسپیشل برانچ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے افسران شامل ہیں۔

 جے آئی ٹی 15 دن کے اندر تحقیقاتی رپورٹ سندھ حکومت کو پیش کرے گی ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے جے آئی ٹی کا نوٹیکفیشن مقتول کے والد کے حوالے بھی کردیا۔