جاوید میاں داد آج باسٹھویں سالگرہ منا رہے ہیں

جاوید میاں داد آج باسٹھویں سالگرہ منا رہے ہیں


کراچی(24 نیوز) جاوید میاں داد دنیائے کرکٹ کا بے تاج بادشاہ جس نے ایک طویل عرصے تک کرکٹ کے میدانوں پر اپنے بلے سے حکمرانی کی، جاوید میاں داد آج اپنی باسٹھویں سالگرہ منا رہے ہیں۔

جاوید میاں داد، دنیائے کرکٹ کا روشن ستارہ 12 جون 1957 کو شہرقائد میں پیدا ہوئے۔  پوت کے پاوں پالنے میں ہی نظر آجاتے ہیں، ابتدائی عمر سے ہی کراچی والوں کی طرح سڑکوں پر کرکٹ کھیلنا شروع کی اور ستر کی دہائی میں جب عبدالحفیظ کاردار جیسےکرکٹ گرو کی نظروں میں آئے توانہوں نے جاوید میاںداد کو ستر کی دہائی کی اہم دریافت قرار دیا۔ 11 جون 1975 کو ویسٹ انڈیز کے خلاف جاوید میاں داد نے پہلا وں ڈے کھیلا اور پھر پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔

جاوید میانداد نے اس زمانے کے بڑے بیٹسمینوں ماجد خان ظہیر عباس اور آصف اقبال کے درمیان خود کو منوایا جاوید میاں داد کے کیرئیر میں کئی خوبصور اننگز آئیں مگر شارجہ کا چھکا سب پر بھاری نکلا۔ 

آج بھی قوم پاکستان کو ورلڈ کپ میں فاتح دیکھنا چاہتی ہے مگر جاوید میاں داد 1992 کے تاریخی اسکواڈ کا اہم حصہ تھے جس نے قوم کو ورلڈ کپ کی فتح کا تحفہ دیا۔  جاوید میاں داد چھ ورلڈ کھینے کا اعزاز بھی رکھتے ہیں جاوید میاں داد کا بلا جہاں رنز اگلتا تھا وہیں ان کا دماغ بھی گروانڈ میں نئی نئی چالین چلتا تھا۔فاسٹ بالرز کو جہاں بلے سے جواب دیا وہیں ۔ ڈینس للی جیسے خطرناک بالر کی میدان میں ہی طبیعت صاف کردی۔

جاوید میاں کے کھیل اور زہین صلاحیت کے کئی بین الاقوامی کر کٹرز بھی معترف ہیں۔ جاوید میانداد نے اپنے طویل کیرئیر میں 123 ٹیسٹ اور 233 ون ڈے کھیلے ٹیسٹ کر کٹ میں آٹھ ہزار سے زائد رنز بنانے والے ملک کے اولین بیٹسمیں تھے اپنے کئرئیر میں 23 سینچریاں اسکور کی حکومت کیطرف سے تمغہ برائے حسن کارکردگی اور ستارہ امیتاز کے اعزاز سے نوازا گیا۔