میگا پراجیکٹ سفید ہاتھی بن گیا

میگا پراجیکٹ سفید ہاتھی بن گیا


پشاور(24نیوز)تحریک انصاف کا واحد میگا پراجیکٹ سفید ہاتھی بن گیا،محکمہ ٹرانسپورٹ پشاور بس ریپڈ ٹرانزٹ کیلئے مزید 10 ارب روپے مانگ لئے۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف اقتدار سنبھالنے کے بعد اپنی پولیسیوں سے عوام کومطمئن کرنے میں کامیاب نہیں ہو پارہی،  ارب روپے مالیت  سے شروع کیا جانے والا پشاور بس ریپڈ ٹرانزٹ منصوبہ سفید ہاتھی بن گیا،  جس کے لئے محکمہ ٹرانسپورٹ پشاور بس ریپڈ ٹرانزٹ کیلئے مزید 10 ارب روپے مانگ لئے،  ڈائریکٹر جنرل پی ڈی اے اسرار الحق  کاکہنا تھاکہ کرائے میں سبسڈی نہ دی گئی تو بی آر ٹی منصوبہ چلانا بھی مشکل ہوگا،ان کاکہناتھاکہ23 مارچ کو منصوبے کا صرف نمائشی افتتاح ہوگا۔

رواں سال جون یا جولائی میں بی آر ٹی مسافروں کےلئے باقاعدہ کھول دیاجائےگا، صوبائی حکومت کے پاس اس وقت صرف 20بسیں ہیں مئی تک مزید بسیں آجائیں گی، منصوبے پر اب تک 67ارب روپے کی لاگت آئی ہے، کرایے میں سبسڈی دینے سے متعلق فیصلہ حکومت کریگی،فی سٹاپ 15 روپے لینے کی صورت میں سالانہ 18-20 کروڑ روپے دینا ہونگے۔

ڈی جی پی ڈی اے کامزید کہناتھاکہ سبسڈی کے بغیر واحد میگا پراجیکٹ چلانا ناممکن ہے، 220 بسوں میں تاحال 20 بسیں ہی پہنچ سکی جبکہ عملے کی تعیناتی،انفراسٹرکچر، دیگر امور تاحال نا مکمل ہیں۔

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER