سچن ٹنڈولکرکا میدان میں وسیم اوروقارکی دہشت کا اعتراف

سچن ٹنڈولکرکا میدان میں وسیم اوروقارکی دہشت کا اعتراف


دہلی(24نیوز) بھارت کے شہرہ آفاق بلے باز سچن ٹنڈولکر نےوسیم اکرم اوروقاریونس کی کرکٹ کے میدان میں دہشت کا اعتراف کرلیا کہتے ہیں کہ وہ ان دونوں پاکستانی باؤلرز کے خوف سے کرکٹ چھوڑنے کا فیصلہ کرنے والے تھے.

بھارتی بلے باز سچن ٹنڈولکر کی زندگی کے سب سے خوف ناک لمحات کون سے تھے؟ کب سچن ٹنڈولکر نے کرکٹ کے میدان سے بھاگ جانے کا ارادہ کیا؟اگر 1989 میں پاک انڈیا کراچی ٹیسٹ کی دوسری اننگ نہ کھیلی جاتی تو  شاید ٹنڈولکر  آج ٹنڈولکر نہ ہوتے.

یہ بھی پڑھیں: اپنوں نے ٹھکرایا،غیروں نے سر آنکھو ں پر بٹھایا

سچن ٹنڈولکر کا کہنا ہے کہ کراچی میں ان کے کیرئیر کے پہلے ہی ٹیسٹ میں انہیں وسیم اوروقارکا سامنا کرنا پڑا تو ان کے جیسے اوسان ہی خطا ہوگئے،ٹنڈولکر کا کہناہے کہ وہ اتنا گبھرائے کہ انہوں نے ڈریسنگ روم میں آکرسینئرکھلاڑیوں سے مشورہ کیا کہ وہ کیا کریں.پریشان اورگبھرائے ہوئے سچن ٹنڈولکر کوسنیئرکھلاڑیوں نے مشورہ دیا کہ ہمت کرو یہ دنیا کے دوبہترین باؤلرزہیں آہستہ آہستہ تم انہیں کھیلنے کے قابل ہوجاؤ گے.
یاد رہے کہ اس سے پہلے پاکستانی اسپیڈ اسٹارشعیب اختربھی اپنی کتاب میں کہہ چکے ہیں کہ سچن ٹنڈولکرمیچ کے دوران ان کا سامنا کرنے سے گبھراتے تھے۔




وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔