نقیب اللہ قتل: راؤ انوار نے ضمانت کیلئے درخواست دائر کردی


کراچی(24نیوز) نقیب اللہ قتل کیس کے مرکزی ملزم راؤ انوار نے ضمانت کے لئے درخواست دائر کردی،درخواست میں موقف اختیارکیا گیاکہ جب نقیب اللہ کا قتل ہوا تو راؤ انوار جائے وقوعہ پر موجود نہیں تھے.

نقیب اللہ قتل کیس کےمرکزی ملزم معطل ایس ایس پی راؤ انوار نے اپنے وکیل کے توسط سے انسداد دہشت گردی کی عدالت نمبر دو میں ضمانت کے لیے درخواست دائر کردی ہے. راؤ انوار کی جانب سےمؤقف اپنایا گیا ہےکہ جب نقیب اللہ کا قتل ہوا تو وہ جائے وقوعہ پر موجود نہیں تھے، اس حوالے سے چالان، رپورٹ، جے آئی ٹی کی فائنڈنگز اور جیوفینسنگ میں تضادات ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: 12مئی2007ءتاریخ میں خون آشام دن، ذمہ دار کون؟ چیف جسٹس نے کیس کی فائل طلب کرلی

درخواست میں مزید کہا گیا ہےکہ پولیس کی جانب سے کیس کی تحقیقات ٹھیک سے نہیں کی گئی ہیں لہٰذا کیس میں ضمانت منظور کیا جائے۔انسداد دہشت گردی کی عدالت نے ملزم راؤ انوار کی درخواست پر 14 مئی کے لیے سرکاری وکیل اور دیگر کو نوٹس جاری کردیئے جب کہ نقیب اللہ قتل کیس کے مرکزی کیس کی سماعت بھی اسی روز ہوگی۔
واضح رہےکہ راؤ انوار کو عدالت نے جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجنے کا حکم دیا تھا لیکن وہ جوڈیشل ریمانڈ پر اپنی گھر پر ہیں، سیکیورٹی خدشات کی بنا پر ملیر کینٹ میں واقع ان کی رہائش گاہ کو ہی سب جیل قرار دیا گیا ہے۔



وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔