خواتین پر پولیس تشدد کی جعلی ویڈیو کا ڈراپ سین

خواتین پر پولیس تشدد کی جعلی ویڈیو کا ڈراپ سین


جامشورو(24 نیوز)  گھر میں گھس کر خواتین پرپولیس تشددکی جعلی ویڈیو کا ڈراپ سین ہوگیا، پولیس نےعورتوں پر فرضی ڈنڈےبرسانےوالے5 ملزموں کوگرفتارکرلیا،ملزموں نے پولیس کودباومیں لانےکیلئے جعلی ویڈیو بنائی تھی۔

تفصیلات کے مطابق چند روزقبل جامشورو میں پولیس وردی میں ملبوس نقاب پوشوں نے گھرپردھاوا بولا،خواتین کو تشدد کا نشانہ بنایا اورتوڑپھوڑکی، واقعے کی ویڈیوسوشل میڈیا پروائرل ہوگئی جس پرلوگوں نے غم و غصے کا اظہار بھی کیا مگر ایس ایس پی جامشورو نے حملے اور واقعے کی تردید کی۔اب خواتین پر پولیس تشدد کی جعلی ویڈیو کا ڈراپ سین ہوگیا ہے، پولیس نے عورتوں پر فرضی ڈنڈے برسانے والے 5 ملزم گرفتار کرلیے ہیں۔

تفتیش کے مطابق پولیس نے ماچھی برادری کے افراد کے خلاف بھتہ خوری اور پولیس اہلکاروں پرحملے کا مقدمہ درج کیا،جس پر ملزموں نے پولیس کو دباو میں لانے کیلئےجعلی ویڈیو بنائی اور سوشل میڈیا پر وائرل کردی، تحقیقات سے پتا چلا کہ پولیس مقابلہ جعلی تھا اور نوشہر وفیروز میں فلمایا گیا جس کو جام شورو کا بتایا گیا۔