فاروق ستار کاایم کیو ایم میں انٹراپارٹی الیکشن کرانے کا مطالبہ


کراچی(24نیوز) ایم کیو ایم کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار نے پارٹی میں انٹرا پارٹی الیکشن کا مطالبہ کردیا۔ان کا کہنا ہے کہ ایک فرد واحد نے مجھے ٹارگٹ کرکےنقصان پہنچایا اور ہروایا، مجھ سے 9 نومبر کی پریس کانفرنس کا بدلہ لیا گیا، میرا گناہ یہ تھا کہ پی ایس پی کے پروجیکٹ کو میں نے ناکام بنایا ۔

ایم کیو ایم پاکستان میں ایک مرتبہ پھر اختلافات کھل کر سامنے آگئے۔کراچی پریس کلب میں ڈاکٹر فاروق ستار نے دھواں دھار پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا خالد مقبول صدیقی نے کارکنان سے مینڈیٹ نہیں لیا اور حادثاتی طورپر مجھ سے سربراہی لے، لہٰذا تنظیم کی موجودہ صورتحال اس بات کا تقاضہ کرتی ہے کہ جلد از جلد انٹرا پارٹی الیکشن کرایا جائے۔

فاروق ستار کا کہنا تھا کہ ایک فرد واحد نے مجھے ٹارگٹ کرکےنقصان پہنچایا اور ہروایا، مجھ سے 9 نومبر کی پریس کانفرنس کا بدلہ لیا گیا، پریس کانفرنس میں کئی باتوں سے پردہ اٹھایا تھا، میرا دل جلا ہوا ہے،کچھ تو ہے جس کی پردہ داری ہے۔انہوں نے کہاکہ میرا گناہ یہ تھا کہ پی ایس پی کے پروجیکٹ کو میں نے ناکام بنایا، میری کوششوں سے ایم کیوایم کا ووٹ بینک قائم ہے، ہم ناقص کارکردگی اور کوتاہیوں کی وجہ سے بھی نشستیں ہارے۔

ان کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم پاکستان نظریاتی پارٹی قائم کرنے کے لئے ایک ایک مہاجر کے پاس جاؤں گا، کارکن او ذمہ داروں کی 5 فروری کی پوزیشن پر بحالی اور انٹرا پارٹی الیکشن کرانا میرا عزم ہے۔

وقار نیازی(Waqar Niazi)

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔