ادویات مافیا نےوزیراعظم کے احکامات ہوا میں اُڑا دیئے

ادویات مافیا نےوزیراعظم کے احکامات ہوا میں اُڑا دیئے


لاہور(24نیوز) وزیراعظم عمران خان کے دیے گئے 72گھنٹے پورے ہو گئے،ادویات سستی نہیں ہوئیں،شہری تاحال مہنگی ادویات خریدنے پرمجبور ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی ادویات کی قیمتیں کم کرنے کی ڈیڈ لائن بھی گزر گئی تاہم ادویات کی قیمتوں میں تاحال کمی نہیں ہو سکی، وزیر اعظم پاکستان کو نوٹس لینے کے باوجود جان بچانے والی ادویات میں کمی نہ ہوسکی، مختلف ادویات کی قیمت میں کمی کی بجائےدگنا اضافہ ہو گیا، شہریوں کو علاج معالجے کیلئے اب پہلے سے کئی گنا مہنگی ادویات خریدنا پڑیں گی۔

ادویات کی قیمتوں میں200سے300فیصداضافہ واپس نہ لیاگیا، ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی ادویات کی پرانی قیمتیں بحال کرنےمیں ناکام رہی،  نئی قیمتوں پرادویات کی فروخت کاسلسلہ جاری ہے۔یاد رہے وزیراعظم عمران خان کی جانب سے 72 گھنٹوں میں ادویات مافیا کو  قیمتوں کمی کا حکم دیا گیا تھا، جس پر عملدرآمد نہ ہو سکا، ادویات میں بخار کے سیرپ پیناڈول کی قمیت 50 سے بڑھ 68 روپے، دماغی امراض کا ایپی وال انجیکشن 87سے 185 روپے, بلڈ پریشر کی ٹیبلٹ کی قمیت 60سے بڑھ کر 126 روپے، کھانسی کا شربت 98 روپے سے بڑھ کر 150 روپے تک فروخت ہونے لگا۔

علاوہ ازیں شوگر کی دوا 101 روپے سے بڑھ کر 190 روپے تک جا پہنچی، شہریوں نے ایک بار پھر اعلیٰ حکام سے کا ادویات کی قیمتوں میں کمی کے حکم پر عملدرآمد کروانے کا مطالبہ کیا ہے۔

Malik Sultan Awan

Content Writer