نواز شریف کی سخت سکیورٹی میں اڈیالہ جیل سے احتساب عدالت پیشی

نواز شریف کی سخت سکیورٹی میں اڈیالہ جیل سے احتساب عدالت پیشی


اسلام آباد(24نیوز) سابق  وزیراعظم نواز شریف کو  احتساب عدالت میں پیش کیا گیا، اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے۔میڈیا کو نیب کورٹ میں جانے اور کوریج سے روک دیا گیا۔
نواز شریف کیخلاف العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز کی سماعت کا طویل وقفے کے بعد آج سے دوبارہ آغاز کیا  گیا ہے۔ نواز شریف کو اڈیالہ جیل سے احتساب عدالت میں پیشی کے لئے سخت سیکیورٹی میں لایا گیا۔ سابق وزیرِاعظم  نواز شریف کی احتساب عدالت پیشی کے وقت سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے، اس موقع پر غیر متعلقہ افراد کا فیڈرل جوڈیشل کمپلیکس میں داخلہ بند رہا۔

پڑھنا مت بھولیں:  قومی اسمبلی کا اجلاس، نو منتخب اراکین نے حلف اٹھالیا

میڈیا کو بھی اندر جانے اور کوریج سے روک دیا گیا۔ لیگی کارکناں اور وکلاء کو بھی اندر جانے دے روک دیا گیا۔ڈاکٹر آصف کرمانیکا کہنا تھا کہ نواز شریف کی احتساب عدالت پیشی کے موقع پر آج سوائے میرے دیگر سینیٹرز اور غیر منتخب افراد کو عدالت کے اندر جانے دیا گیا۔  ان کا کہنا تھا کہ یہ اوپن ٹرا ئل ہے اور اوپن ٹرائل کورٹ اٹینڈ کرنے میں کوئی قید نہیں ہونی چاہئے۔ چیف جسٹس پاکستان اس دھرے معیار اور امتیازی سلوک کا نوٹس لیں۔  پیشی کے بعد نواز شریف کو سخت سکیورٹی حصار میں اڈیالہ جیل واپس منتقل کر دیاگیا۔ کیس کی اگلی سماعت بد ھ کو ہوگی۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔