مشال خان قتل ،فیصلے کیخلاف بھائی نے درخواست دائر کردی


پشاور (24نیوز)انسداد دہشتگردی عدالت کے فیصلے کے خلاف مشال خان کے بھائی ایمل خان نے پشاور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کردی۔
تفصیلات کے مطابق ولی خان یونیورسٹی میں ہجوم کے ہاتھوں مارے جانے والے طالبعلم مشال خان کے بڑے بھائی ایمل خان نے انسداد دہشتگردی عدالت کے فیصلے کے خلاف پشاور ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا ہے۔ ایمل خان نے اپنی درخواست میں استدعا کی ہے کہ مشال قتل کیس میں بری کیے گئے ملزموں کے خلاف دوبارہ مقدمہ چلایا جائے۔
واضح رہے کہ 7 فروری کو مشال قتل کیس میں گرفتار 58 ملزموں کوسنٹرل جیل ہری پور میں انسداد دہشتگردی عدالت کے جج فضل سبحان کے سامنے پیش کیا گیا۔ جج فضل سبحان نے مشال قتل کیس کے ایک مجرم کو سزائے موت، پانچ کو عمر قید اور25 کو 4۔4سال قیدکی سزا سنائی تھی جبکہ 26 ملزموں کو شک کا فائدہ دے کر رہا کردیا تھا،ملزموں کو سزا ٹولیو ں کی شکل میں بلا کر سنائی گئی تھی۔ خیبر پختونخوا پولیس اور مشال کے اہلخانہ نے انسداد دہشتگردی عدالت کے فیصلے کے خلاف پشاور ہائیکورٹ سے رجوع کا اعلان کیا تھا۔

اظہر تھراج

انٹرنیشنل ریلشنزمیں ایم فل ،صحافی اور کالم نگار ہیں،مختلف اخبارات ،ٹی وی چینلز میں کام کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں