خیبر پختونخوا اسمبلی کا اجلاس ہنگامہ آرائی کی نظر


پشاور (24 نیوز) خیبر پختونخوا اسمبلی میں مارا ماری، شور شرابا رہا، ایک ساتھ کئی معاملات پر ارکان آپس میں الجھ گئے، اجلاس مچھلی بازار بن گیا، اسپیکر نے شور شرابے کے باعث اجلاس ملتوی کردیا۔

خیبر پختونخوا اسمبلی کا اجلاس آج دوسرے روز بھی ہنگامہ خیز رہا، رکن صوبائی اسمبلی امجد آفریدی نے ایل این پی جی کے بقایاجات پر سیٹیاں بجا کر احتجاج کیا تو دیگر ممبران نے بھی اسکی حمایت کی اس دوران صوبائی وزیر شاہ فرمان نے مسائل حل کرانے کی یقین دہانی کرائی اور ساتھ ہی ختم نبوت کے معاملے کو اٹھا دیا۔ انہوں نے کہا کہ احتجاج سے بہتر ہے، ختم نبوت پر فتویٰ لیں۔ جس پر اورنگزیب نلوٹھا نے کہا کہ پہلے فتویٰ ان پر لگائیں، جو خواتین کے ساتھ عائشہ گلالئی جیسا سلوک کرتے ہیں۔

جماعت اسلامی کے محمد علی نے حکمرانوں کیخلاف نازیبا الفاظ کہے تو اسپیکر نے روک دیا۔ اسپیکر نے شور شرابے کے باعث اجلاس ملتوی کردیا۔