شاہ زیب قتل کیس، شاہ رخ جتوئی سمیت دیگر ملزموں کے قابلِ ضمانت وارنٹ جاری

شاہ زیب قتل کیس، شاہ رخ جتوئی سمیت دیگر ملزموں کے قابلِ ضمانت وارنٹ جاری


کراچی(24نیوز) شاہ زیب قتل کیس سیشن عدالت کو منتقل کئے جانے کیخلاف سول سوسائٹی کی درخواست پر سماعت سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں ہوئی، عدالت نے شاہ رخ جتوئی سمیت دیگر ملزموں کے قابلِ ضمانت وارنٹ جاری کردئیے، ملزموں کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کا حکم دے دیا۔
شاہ زیب قتل کیس سیشن عدالت منتقل کرنے کے خلاف سول سوسائٹی کی درخواستوں کی سپریم کورٹ کراچی میں چیف جسٹس ا?ف پاکستان کی سربراہی میں سماعت،،،درخواست گزاروں کے وکیل بیرسٹر فیصل صدیقی نے موقف اپنایا کہ مقدمے میں اے ٹی سی نے دہشت گردی کا واقعہ قرار دیا تھا جبکہ سندھ ہائیکورٹ نے اس کے برخلاف ذاتی جھگڑا قرار دیا،،، شاہ رخ جتوئی کے وکیل بیرسٹر لطیف کھوسہ نے موقف اپنایا کہ تھپڑ مارنے پر جھگڑا ہوا اور معافی نہ مانگنے پر گولی چلی،فریقین کے مابین صلح ہوچکی ہے اب مزید سماعت کی ضرورت نہیں ،ملزمان نے کسی مسجد یا امام بارگاہ پر حملہ نہیں کیا جو دہشت گردی قرار دی جائے،،جب واقعہ ہوا اس وقت وہاں لوگ موجود نہ تھے،،ملزم غلام مرتضیٰ لاشاری کے وکیل بابر اعوان نے موقف اپنایا کہ کوئی یہ نہیں کہہ سکا کہ واقعے سے دہشت یا خوف پھیلا،،چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ فیصلہ قانون کے مطابق ہوگا، عدالت نے سول سوسائٹی کی درخواست سماعت کے لئے منظور کرلی،وفاقی وزارتِ داخلہ کو ملزمان کے نام ای سی ایل میں شامل کرکے تمام ایئر پورٹ کو ہدایت نامہ بھیجنے کا حکم دیا،عدالت نے تمام فریقین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ملزمان کے قابلِ ضمانت وارنٹ بھی جاری کردیئے