شہباز شریف کا گرفتاری کی صورت میں متبادل قیادت کا اعلان

شہباز شریف کا گرفتاری کی صورت میں متبادل قیادت کا اعلان


لاہور(24نیوز) شہباز شریف   کا کہنا ہے کہ  نواز شریف کا استقبال ہرصورت ہوگا اور بھرپور ہوگا، اُنہوں نے اپنی گرفتاری کی صورت میں متبادل قیادت کا اعلان بھی کردیا  جو اُن کے خاندان ہی سے ہوگی ۔
نو از شریف اورمریم گرفتار ہوئے  تو شریف خاندان میں قیادت کے لیٗے کوئی  دستیاب نہ ہوگا ۔ حسن اور حسین کہتے ہیں وہ برطانوی شہری ہیں۔ وہ والد کی سیا سی وراثت کے دعویدار بھی نہیں ۔ کلثوم نوازبیماری سے لڑرہی ہیں  شاید اسی لیٗے شہباز شریف نے کہا ہے مجھے  گرفتار کیا گیا تو  قیادت حمزہ شہباز کرے گا ۔ وہ بھی گرفتار ہوا تو سلیمان شہباز قائد ہوگا۔

یہ بھی پڑھین: نواز شریف کی وطن واپسی پر مسلم لیگ ن نے کیا پلان بنایا؟ 24نیوز نے پتہ لگالیا

انھوں نے کہا کہ  اگر اسے بھی پکڑلیا گیا تو شہباز شریف کہتے ہیں قیادت میری بیٹیاں کریں گی۔  اگر اسے ن لیگ کی سیاست وراثت کی نواز شریف خاندن سے شہبازشریف خاندان منتقلی کا باضابطہ اعلان کہا جائے  تو غلط نہ ہوگا ،  بس اب انتظار تو صرف اس بات کا کہ کب الیکشن کمیشن میں ن لیگ کا نام باضابطہ طور پر ش لیگ رجسٹرڈ ہوگا۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔