پاکستان اسٹاک ایکس چینج مندی کا شکار، سرمایہ کاروں کے 88 ارب ڈوب گئے

پاکستان اسٹاک ایکس چینج مندی کا شکار، سرمایہ کاروں کے 88 ارب ڈوب گئے


 (24 نیوز) ملک میں سیاسی بےیقینی کے باعث سٹاک ایکسچینج کا برا حال ہوگیا۔ ہنڈرڈ انڈیکس 566 پوائنٹ کی کمی سے 46 ہزار 71 پوائنٹس پر بند، شئیرز کی مجموعی مالیت میں 88 ارب 39 کروڑ روپے کی کمی، غیر ملکی سرمایہ کاری میں ایک کروڑ 75 لاکھ ڈالر اضافہ ہوا۔

 24 نیوز ذرائع کے مطابق رواں ہفتے کے دوران عدالتی فیصلوں اور ملکی سیاست میں تیزی نے پاکستان اسٹاک ایکس چینج کو مندی کا شکار کر دیا۔ سرمایہ کاروں کے 88 ارب روپے ڈوب گئے۔

ہفتے کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاروں کی طرف سے خریداری میں نمایاں اضافہ بھی بازار کی مندی ختم کر سکا۔ کاروباری ہفتے کے اختتام پر مجموعی طور پر ہنڈرد انڈیکس 566 پوائنٹ کی کمی سے 46 ہزار 71 پر بند ہوا۔ کاروباری حجم میں 5 فیصد کمی دیکھی گئی۔

دوسری جانب اوسطا روزانہ 24 کروڑ 74 لاکھ شئیرز کا کاروبار ہوا۔ مارکیٹ میں شئیرز کی مجموعی مالیت 88 ارب 39 کروڑ روپے کی کمی سے 94 کھرب 43 ارب روپے رہ گئی۔ پانچ روز میں بیرونی سرمایہ کاری کے حجم میں ایک کروڑ 75 لاکھ ڈالر کا اضافہ رکارڈ کیا گیا۔ ہفتے کے دوران مجموعی طور پر بینکنگ سیکٹر میں زیادہ مندی دیکھی گئی۔ جبکہ فرٹیلائزر اور کمیکل سیکٹر میں تیزی رہی۔