سیاست کے فیصلے پولنگ بوتھ پر ہوتے ہیں، عدالتوں میں نہیں: وزیراعظم


جلالپور(24 نیوز) وزیراعظم شاہد خاقان عباسی  کی دھیمے دھیمے لہجے میں عدلیہ پر تنقید، سیاست کے فیصلے عدلیہ میں ہونا اچھی بات نہیں، نواز شریف کو بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر نااہل کیا گیا

 24 نیوزذرائع کے مطابق وزیراعظم دھیمے دھیمے لہجے میں پھر عدلیہ پر بول پڑے۔ جلالپور پیروالا میں تقریب سے خطاب کررتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ  سیاست کے فیصلے عدلیہ میں ہونا اچھی بات نہیں۔

’’وزیراعظم نے احمد پورشرقیہ کو ضلع بنانے کا عندیہ دیدیا‘‘

انہوں نے مزید کہا کہ ہم نے تاحیات نااہلی بھی قبول کی لیکن تاریخ کچھ اور بتائے گی۔ سیاست کے فیصلے صرف پولنگ بوتھ پر ہوتے ہیں۔ جولائی میں فیصلہ نوازشریف کے حق میں ہوگا۔ پاکستان اگر چلے گا توجمہوریت پر چلے گا۔

پڑھنا مت بھولئے:مریم نواز کے ٹکٹ دینے یا نہ دینے کے بیان پر چوہدری نثار بھڑک اُٹھے

 وزیراعظم نے کہا کہ گالیاں دینے والے مسائل حل نہیں کرسکتے۔ نام نہاد لیڈروں کے تمام دعوے جھوٹے ثابت ہوگئے۔ عوام کی نمائندگی پریس کانفرنس کرنے سے نہیں ہوتی۔ نئے صوبے بنانے کیلئے تمام سیاسی مل کر فیصلہ کر لیں۔

وزیراعظم نے احمد پورشرقیہ کو ضلع بنانے کا عندیہ دیدیا۔