نوٹس ملتا نہیں اور۔۔اپوزیشن کا سینیٹ سے واک آﺅٹ



اسلام آباد( 24نیوز )سینیٹ اجلاس اپوزیشن واک آئوٹ کی نذرہو گیا، متحدہ اپوزیشن نے سینیٹ میں خواجہ سعد رفیق کے پروڈکشن آرڈر نہ جاری کرنے پر ایوان سے واک آوٹ کیا، نیب کارروائیوں پر ن لیگ کا ایوان میں احتجاج رہا، روپے کی قدر میں کمی پر توجہ دلائو نوٹس پر وزیر مملکت حماد اظہر کے جواب پر اپوزیشن نے احتجاج کرتے ہوئے ایوان سے واک آﺅٹ کر دیا۔

ڈپٹی چیئرمین سلیم مانڈوی والا کی زیر صدارت سینیٹ اجلاس میں اپوزیشن لیڈر راجہ ظفر الحق, جاوید عباسی اور دیگر نے سینیٹر پیر صابر شاہ کے خلاف نیب کارروائی کے حوالے سے آنے والی خبروں پر کہا نیب نے یہ نیا طریقہ کار خود اختیار کیا ہے یا کسی کے کہنے پر ایجاد کیا ہےلوگوں کو نوٹس نہیں ملتا اور اخبارات میں نام آجاتا ہے کہ نیب نے انھیں طلب کیا ہے یا یہ میڈیا ٹرائل ہے۔

ڈپٹی چیئرمین سیلم مانڈوی والا نے کہا کہ اراکین کو نوٹس سے پہلے نیب سینٹ سیکرٹریٹ کو آگاہ کرے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ نے نیب کی طرف سے اراکین کو نوٹسز جاری کئے جانے کامعاملہ متعلقہ کمیٹی کے حوالے کرتے ہوئے سات روز میں رپورٹ طلب کر لی۔

سینیٹرآصف کرمانی نے نیب کوحکومتی ہاتھ کی گھڑی اورکسی کی چھڑی قراردیتے ہوئے کہاکہ چیئرمین نیب ن لیگی اراکین کے بارے بیان دے کر متنازع ہوچکے ہیں انہیں ایوان میں طلب کرکے وضاحت مانگی جائے۔

سینیٹرشیری رحمان نے روپے کی قدرمیں کمی سے متعلق توجہ دلاﺅ نوٹس پر وزیرخزانہ کی غیرموجودہ پراحتجاج ریکارڈ کروایا اور ایوان سے واک آو¿ٹ کیا، .اپوزیشن نے احتجاج کرتے ہوئے کورم کی نشاندہی کر دی جس کے باعث اجلاس پیر دو پہر دو بجے تک ملتوی کر دیا گیا۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer