بہت نکلے مرے ارمان لیکن پھر بھی کم نکلے

 بہت نکلے مرے ارمان لیکن پھر بھی کم نکلے


لاہور( 24نیوز )سابق وزیراعظم نواز شریف سے لیگی رہنماؤں نے کوٹ لکھپت جیل میں ملاقاتیں کیں،والدہ بیگم شمیم، بیٹی مریم نواز اور کیپٹن صفدربھی پہنچے۔مریم گھر سے کھانا بھی لائیں،میاں نواز شریف کاکہنا ہے کہ انشاءاللہ اگلے جمعہ تک رہائی مل جائے گی،مشاہداللہ کہتے ہیں ویلنٹائن ڈے نواز شریف کےساتھ منایا۔

سابق وزیراعظم میاں نوازشریف سے  ملاقات کے لیے صبح سے ہی رش لگ گیا، پرویز رشید،امیرمقام، مرزا جاوید ،پیرصابر شاہ ،میاں مصطفیٰ، ہارون بھٹہ سمیت دیگر  نے بھی  ملاقات کی ،میاں نواز شریف نے ملاقاتیوں سے گفتگو میں کہا کہ صبح سات بجے جب بارش کو دیکھا تو اس وقت دل چاہ رہا تھاکہ سکردو جیسا موسم ہوگیا ہے ، اگر آزاد ہوتا تو اس موسم میں مالم جبہ برف باری سے محظوظ ہوتا ۔

میاں نوازشریف نے شعر بھی پڑھا''صبح ہوتی ہے شام ہوتی ہے یونہی زندگی تمام ہوتی ہے،انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف والے ہمارے منصوبوں پر اپنے نام کی تختی لگا رہے ہیں، صحت کارڈ ہمارا ہی پراجیکٹ تھا ، مجھے وہ ٹی وی دیا ہے جس پر کوئی خبر نامہ نہیں آتا۔ عدالتی کارروائی دیکھنے سے محروم رہا ، میاں نوازشریف کی جلد رہائی کے لئے بھی دعا کرائی گئی۔

سعودی عرب نے میرے ساتھ پیکج طے کیا تھا:نواز شریف

  سابق وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ موٹرویز اور ہیلتھ کارڈ سب ہمارے منصوبے ہیں، موجودہ حکومت ہمارے منصوبے ری لانچ کررہی ہے اور اس کا کریڈٹ لینے کی کوشش کررہی ہے، سعودی عرب کی سرمایہ کاری کی بات چیت میرے دور میں فائنل ہوئی تھی، سعودی امدادی پیکیج ولی عہد نے میرے ساتھ طے کیا تھا البتہ بین الاقوامی معاملات طے ہونے میں وقت لگتا ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ہم اقتدار میں ہوتے تو آج لوگ اورنج لائن ٹرین میں سفر کررہے ہوتے، لاہور ملتان موٹروے تیار چھوڑ کرآئے ان سے وہ مکمل نہیں ہوپارہی، لاہور ملتان موٹروے کا ان سے لاہور میں انٹرچینج نہیں بن پارہا، ہمارے دور میں بلوچستان میں ہائی ویز کا جال بچھ گیا تھا، ہمارے منصوبوں کا کریڈٹ ضرور لیں لیکن عوام کے لیے انہیں کھول تو دیں۔نیب نے شہباز شریف پر جومقدمات بنائے اس پر نیب کو شرمندگی اٹھانا پڑی، پنجاب میں نیب نے ترقیاتی کاموں پر کیس بنائے مگر کے پی کے والوں کے خلاف کچھ نہیں کیا، شہبازشریف نے متعدد پاور منصوبے بنائے اور کے پی کے والوں سے ایک نہیں بن سکا۔

ان کا کہنا تھا کہ پرویز مشرف نے نیب کا قانون مجھے فوکس کرکے بنایا، ابتدا میں ہمیں اندازہ ہی نہیں تھا کہ نیب کا قانون اتنا خطرناک ہوگا۔اپنی صحت سے متعلق بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت نے میری صحت سے متعلق چار بورڈ بنائے، سب بورڈز نے میرے دل کی تکلیف ظاہر کی۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer