دہشتگردی کیخلاف جتنا کام ہونا چاہیے تھا وہ نہیں ہوا:بلاول


پشاور( 24نیوز ) پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف جتنا کام ہونا چاہیے تھا وہ نہیں ہوا، انتہاپسندی اور دہشت گردی کا سلسلہ پھر سے سامنے آرہا ہے، افسوس کی بات ہے انتہا پسندی اور دہشت گردی کا آج تک حل نہیں نکال سکے، دہشت گردی کے خلاف جتنا کام ہونا چاہیے تھا وہ نہیں ہوا۔
پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے سانحہ مستونگ کے شہدا سے اظہار تعزیت کیا،انہوں نے کہا ہے کہ انتخابی مہم میں رکاوٹیں ڈالی جارہی ہیں اور مختلف مقامات پر روکا جارہا ہے، کارکنوں پر وفاداری تبدیل کرنے کے لئے دباو ڈالا گیا، پیپلزپارٹی نے ہمیشہ مشکل حالات کا سامنا ہے اور آگے بھی کرتی رہی گی،ان تمام حالات کے باوجود الیکشن میں بھرپور حصہ لیں گے۔

 یہ بھی پڑھیں:  مستونگ دھماکہ میں سراج رئیسانی کی تدفین آج ہوگی، ہر آنکھ اشکبار
بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ انتخابات سے قبل دھاندلی کی کوشش کی جارہی ہے لیکن پیپلزپارٹی میدان میں کھڑی ہے، انتخابات کا کبھی بائیکاٹ نہیں کرے گی، مطالبہ ہے کہ بروقت الیکشن کرائے جائیں، ہارون بلور کی شہادت کے بعد اظہار یکجہتی کے طور پر جلسہ ملتوی کیا اور مستونگ میں دھماکے کے باعث مالاکنڈ میں جلسہ منسوخ کردیا ہے، اب مالاکنڈ جاوں گا اور کارکنوں سے ملاقات کروں گا۔
چیئرمین پیپلزپارٹی نے مزید کہا کہ اداروں کو مضبوط نہیں بنائیں گے تو عوام کے مسائل حل نہیں ہو سکیں گے، جماعتوں اور اداروں کو ایک پیج پر لانے کے لیے پارلیمنٹ کو استعمال کرنا چاہیے، اقتدار میں ائے تو پارلیمان کے فورم سے سب کو ایک پیج پر لائیں گے۔