پشاور: محکمہ صحت نے بچوں کے اموات کی سالانہ رپورٹ جاری کردی


خیبرپختونخوا ( 24نیوز )  سال 2017 میں سرکاری اسپتالوں میں مجموعی طور 16009 نومولود بچے جاںبحق ہوگئے ہیں، روزانہ 44 بچے 25 اضلاع کے سرکاری اسپتالوں میں موت کی وادی میں چلے جاتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا میں )  سال 2017 میں سرکاری اسپتالوں میں مجموعی طور 16009 نومولود بچے جاںبحق ہوگئے ہیں، روزانہ 44 بچے 25 اضلاع کے سرکاری اسپتالوں میں موت کی وادی میں چلے جاتے ہیں۔ محکمہ صحت کی جاری کردہ رپورٹ کے مطابق سب سے زیادہ چارسدہ میں بچے مرگیے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  جناح ہسپتال کی سنی گئی، آٹھ میں سے چار لفٹس کو فعال کر دیا گیا 

رپورٹ کے مطابق سرکاری اسپتالوں میں ہر گھنٹے میں تقریبا 2 بچے جاں بحق ہویے ہیں۔ ڈی ایچ آیی ایس رپورٹ کے مطابق 395 خواتین زچگی کے دوران زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھیں۔چارسدہ میں پیدا ہونے والے 16 ہزار سے زاید بچوں میں 6 ہزا سے زاید جاں بحق ہوئے۔   بچوں کے اموات کی وجہ نمونیا، ہیضہ، ملیریا اور خسرہ قرار دی گئی۔

پڑھنا نہ بھولیں:میو ہسپتال جرائم کنڑول کرنے میں ناکام ہو گیا 

غذایی قلت دوران زچگی پیچیدگیاں بھی موت کا سبب بنی ہیں۔ دوسرے سالوں کی نسبت 2017 میں بچوں اور خواتین کی شرح اموات میں کمی واقع ہویی ہے۔