بھارتی آرمی چیف جنرل بپن نے کشمیریوں کے آگے گھٹنے ٹیک دیے


 24 نیوز: کشمیر کی تحریک آزادی نےبھارتی فوج کی نیندیں حرام کردیں، بھارتی آرمی چیف جنرل بپن گھٹنے ٹیکنے پر مجبور ہوگیا۔ جنرل بپن کا کہنا ہے کہ کشمیریوں کے ساتھ امن مذاکرات کی کوشش کرنی چاہئیے۔

 24 نیوز ذرائع کے مطابق بھارتی آرمی چیف کی ساری اکڑ نکل گئی۔ طاقت کے نشے میں چور جنرل بپن راوت کہتا تھا کشمیری جومرضی کرلیں آزادی نہیں ملے گی، اب کہتا ہے مذاکرات ہونے چاہئیں۔ جنرل راوت نے کہا ہم جتنےکشمیری مارتے ہیں اس سے زیادہ تحریک آزادی میں شامل ہوجاتے ہیں۔

یہ خبر بھی پڑھیں: ایسے پاکستان کیلئے جدو جہد کر رہے ہیں جہاں قانون کی حکمرانی ہو: آرمی چیف

بھارتی آرمی چیف کا کہنا تھا، ہم دراندازی پر قابو پاسکتے ہیں لیکن کشمیری نوجوانوں پرنہیں، لہذا امن کو ایک موقع دینا چاہیے۔ مقبوضہ کشمیر میں اس سلسلے کو روکنے کے لیے کچھ کرنا ضروری ہے۔

خبر پڑھنا مت بھولئے: پرویز مشرف الیکشن سےآؤٹ، سپریم کورٹ نے حکم واپس لے لیا

جنرل راوت نے کہا تھا کہ چاہے جتنے کشمیری مارے جائیں اسے فرق نہیں پڑتا۔ حالیہ بیان نے یہ واضح کردیا کہ فرق پڑتا ہے۔ اب کشمیریوں کو روکنا مشکل ہی نہیں ناممکن ہے۔