کراچی: دودھ کا بحران سنگین صورتحال اختیار کر گیا


کراچی(24نیوز) کراچی میں بچے دودھ کو اور بڑے چائے کو ترس گئے۔ ضلعی حکومت سرکاری نرخ پر دودھ فروخت کرانے میں ناکام ہوگئی۔

ڈیری فارمرز کی جانب سے دودھ کی قیمتوں میں اضافے کے بعد شہر قائد میں دودھ کا بحران پیدا ہونے خدشہ بڑھ گیا ہے۔ دودھ کی قیمتوں میں اضافہ کے بعد ری ٹیلرز نے بھی بطور احتجاج دکانیں بند کردی۔ دودھ کی قیمتوں میں اضافہ اور ری ٹیلرز کے احتجاج کے باعث سب سے زیادہ اذیت شہری بھگت رہے ہیں۔

کمشنر کراچی کی جانب سے مقرر کردہ دودھ کی قیمت پر عمل نہ کرتے ہوئے ڈیری فارمرز ایسوسی ایشن نے خود ساختہ طور پر دودھ کی فی کلو قیمت میں 11 روپے تک اضافہ کردیا ہے، جس کے بعد شہر میں دودھ کی فی لٹر قیمت 95 روپے تک پہنچ چکی ہے

دوسری جانب سندھ ہائیکورٹ میں ڈیری فارمز کی جانب سے دودھ کے نرخوں میں غیر قانونی اضافے کیخلاف درخواست کی سماعت ہوئی،،عدالت نے فریقین سے 20 مارچ تک جواب طلب کرلیا۔