پرائیویٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز کو خود داخلے کرنے سے روک دیا گیا


(24نیوز):حکومت کا طبی تعلیم کا میرٹ یقینی بنانے کیلئے بڑا فیصلہ، صوبے بھر کے پرائیویٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز میں بھی داخلہ سنٹرلائزڈ ہوگا۔ داخلہ فارم یو ایچ ایس جمع کرے گی اور میرٹ بھی مرتب کرے گی ۔ پرائیویٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز کو خود داخلے کرنے سے روک دیا گیا ۔

پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کی ایم بی بی ایس اور بی ڈی ایس میں داخلے کیلئے سال دو ہزار سولہ کے ریگولیشنز کے تحت پنجاب حکومت نے پرائیویٹ میڈیکل کالجز میں بھی داخلہ سنٹرلائزڈ کرنے کیلئے شیڈول جاری کر دیا ۔ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز سے الحاق شدہ تئیس پرائیویٹ میڈیکل کالجز اور گیارہ ڈینٹل کالجز میں داخلے کیلئے امیدوار اٹھارہ سے تیس نومبر تک یو ایچ ایس ، راولپنڈی اور نشتر میڈیکل یونیورسٹی میں داخلہ فارم جمع کرائیں گے جس کے بعد یو ایچ ایس صوبے بھر کے پرائیویٹ میڈیکل کالجز میں ایم بی بی ایس کی دو ہزار سات سو اور ڈینٹل کالجز میں بی ڈی ایس کی چھ سو پچیس نشستوں کیلئے میرٹ لسٹ جاری کرے گی تاہم پرائیویٹ کالجز کی میرٹ لسٹ سرکاری میڈیکل کالجز کے بعد جاری ہوگی۔

یو ایچ ایس نے اس فیصلے پر عملدرآمد کیلئے تمام پرائیویٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز کو خود داخلے کرنے سے روک دیا ہے ۔ پرائیویٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز کی فیس بھی آن لائن جمع ہوگی اور اس سے ہٹ کر کوئی پرائیویٹ کالج فیس یا ڈونیشن کے نام پر کوئی رقم وصول نہیں کرسکے گا ۔