سیاسی یکجہتی کے بغیر 2017 کا الیکشن ہوتا نظر نہیں آرہا: فضل الرحمان


اسلام آباد (24 نیوز): امیر جمعیت علمائے اسلام (ف) مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ اگر سیاسی قوتوں نے یکجہتی کا مظاہرہ نہ کیا تو ہوسکتا ہے قوم 2017 کا الیکشن نہ دیکھ سکے۔ سیاسی جماعتیں سپیکر کے ذریعے حادثے کو ٹالنے کی کوشش میں ہیں۔ اگر ایسا حادثہ ہو بھی گیا تو ہم جمہوریت کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔

 

نیشنل پریس کلب میٹ دی پریس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ امریکہ اور بھارت کے مفادات ایک ہیں۔ امریکہ سیاہی کی بجائے خون سے سرحدوں کی نئی لکیریں کھینچ رہا ہے۔ اس کے لئے وہ مسلم ملکوں میں اندرونی سیاسی عدم استحکام پیدا کررہا ہے جس کی بنیاد پر وہ سی پیک کو ناکام بنانا چاہتا ہے۔ عدالتی فیصلوں سے سیاسی عدم استحکام آیا۔

 

مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ بھارت کشمیریوں پر ظلم کی آخری حدیں پار کرگیا ہے اور نہ ہی مسئلہ کشمیر پر پاکستان کے ساتھ مذاکرات کے لئے تیار ہے۔

 

فاٹا اصلاحات سے متعلق مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ معاملے کو ایم ایم اے کی اسٹئرینگ کمیٹی کے حوالے کردیا ہے، جو فاٹا اصلاحات سے متعلق معاملات پر کام کرے گی۔