کسی بھی قبضہ مافیا کو نہیں چھوڑیں گے:شہر یار آفریدی

کسی بھی قبضہ مافیا کو نہیں چھوڑیں گے:شہر یار آفریدی


اسلام آباد( 24نیوز )وزیر مملکت برائے داخلہ شہر یار آفریدی نے کہا ہے کہ سی ڈی اے کا ماسٹر پلان تبدیل کرنے کے لئے چیئرمین سی ڈی اے سے وزیراعظم کی تفصیلی ملاقات ہوئی جس کے مطابق تمام متاثرین کو ان کے حقوق دئیے جائیں گے، اسلام آباد کو قبضہ مافیا سے نجات دی جائے گی،ایس پی طاہر داوڑ کا معاملہ حساس ہے اس پر بات نہیں کرسکتے،اللہ نہ کرے ایسا کوئی واقعہ ہواہو۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے کہا ہے کہ سی ڈی اے کا ماسٹر پلان تبدیل کرنے کے لئے چیئرمین سی ڈی اے سے وزیراعظم کی تفصیلی ملاقات کے بعد علی عوان نے کہا کہ اس وقت اسلام آ باد میں پانی کا مسئلہ ہے اور پلان تبدیل کر کے اسلام آباد کے شہریوں کو ان کے حقوق ترجیحی بنیادوں پر دئےے جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ بحریہ اینکلیو سے 33ہزار کنال واگزار کی گئی ہم ہر مافیا کے خلاف پکا ہاتھ ڈال کر کام کر رہے ہیں، ایک سوال کے جواب میں وزیر مملکت نے کہا کہ ہم نے پہلی بار دو موضع جات سے 330زار کنال اراضی واگزار کرائی،ہم اسلام آباد کے متاثرین کے مسائل کے حل کے لئے کوشاں اور بہت جلد اس مسئلے کے لئے چیئر مین سی ڈی اے سے مل کر حل تلاش کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ قبضہ مافیا خواہ تحریک انصاف سے ہی کیوں ہو ہم انہیں نہیں چھوڑیں گے، اسکی پلان کی تیاری میں ایک کمیشن بنایا جائے گا اور یہ 6 ماہ میں مکمل ہو جائے گا۔

جی سکس کے قبضے گروپ کے حوالے سے علی اعوان نے کہا کہ ہم قبضے کرنے والوں کے خلاف کام کر رہے ہیں نہ کہ غریبوں کے گھرگرانے کا کام کرتے ہیں، پاکستان میں لاپتہ افراد کی بازیابی کے حوالہ سے شیر یار آفریدی نے کہا کہ جتنے لاپتہ افراد ہیں ان کے لئے وزیراعظم پاکستان ایک پالیسی بنائی ہے جو بہت جلد کام کرے گی۔ سوسائٹیوں کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ کسی جعلی سوسائٹی ہولڈر کو معافی نہیں ملے گی آپریشن رکے گا نہیں آگے بڑھے گا، قانون صرف غریبوں کے لئے نہیں بنا اس کی لپیٹ میں سب آئیں گے۔