سابق صدر کو سانس لینے میں دشواری، پیپلزپارٹی کا اہم مطالبہ

سابق صدر کو سانس لینے میں دشواری، پیپلزپارٹی کا اہم مطالبہ


اسلام آباد( 24نیوز ) پمز ہسپتال میں زیرعلاج سابق صدر آصف علی زرداری کو سانس لینے میں دشواری کا سامنا ہے، پیپلز پارٹی نے ایک بار پھر سابق صدر آصف علی زرداری کے لئے نجی میڈیکل بورڈ بٹھانے کا مطالبہ کردیا۔

ہسپتال ذرائع کے مطابق سابق صدر آصف علی زرداری کی ایم آر آئی کے بعد تکلیف میں اضافے ہوا ہے، آصف علی زرداری کو کمزوری اور قے کی بھی شکایت ہیں،ڈاکٹرز نے آصف علی زرداری کو سفر کی اجازت دینے سے انکار کردیا ہے جبکہ انہیں سانس لینے میں بھی تکلیف ہے۔

پیپلزپارٹی کے رہنما راجہ پرویز اشرف کا کہنا ہے کہ حکومتی ڈاکٹر بھی سابق صدر کو ہسپتال منتقل کرنے کا کہہ رہے ہیں لیکن حکومت ہدایات پر عمل نہیں کررہی، سابق صدر کی میڈیکل رپورٹس بھی بلاول بھٹو اور آصفہ بھٹو کو نہیں دی جارہی۔

پیپلز پارٹی نے سابق صدر آصف علی زرداری کے لئے نجی میڈیکل بورڈ بٹھانے کا مطالبہ کردیا،نائب صدر پیپلز پارٹی سینیٹر شیری رحمان اور سابق ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی فیصل کریم کنڈی کا کہنا تھا کہ پمز بورڈ نے وہی خدشات ظاہر کئے ہیں جو ہم گزشتہ 4 ماہ سے کر رہے ہیں۔

شیری رحمان نےکہاکہ سابق صدر کے ذاتی معالج تک کو ان تک رسائی نہیں دی جا رہی،حکومت کا اپنا بورڈ کہہ رہا ہے کہ آصف علی زرداری کی طبیعت نازک ہے،پرائیویٹ میڈیکل بورڈ تشکیل دیا جائے،3 ماہ سے بغیر ٹرائل کے کون نی انکوئری ہو رہی ہے،کیا مدینہ کی ریاست میں ایسا ہوتا ہے؟